مغربی ممالک مشرق وسطی کو مضبوط اور مستحکم نہیں دیکھنا چاہتے

کیٹیگری لبنان
Wednesday, 06 September 2017


حزب اللہ لبنان کے نائب سربراہ شیخ نعیم قاسم نےرشیا ٹو ڈے کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ داعش سمیت تمام وہابی دہشت گرد تنظیمیں امریکی محصول اور پیداوار ہیں امریکہ نے داعش کے ذریعہ شامی حکومت کو گرانے اور بشار اسد کا تختہ الٹنے کی بڑی کوشش کی لیکن اسے ناکامی کا سامنا کرنا پڑا۔ شیخ نعیم قاسم نے کہا کہ مغربی ممالک مشرق وسطی کو مضبوط اور مستحکم نہیں دیکھنا چاہتے اور یہی وجہ ہے کہ وہ اس علاقہ میں مسلسل دہشت گردی کے ذریعہ عدم استحکام پیدا کررہے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ کمزور مشرق وسطی مغربی ممالک کے مفاد میں ہے۔ شیخ نعیم قاسم نے کہا کہ " چاہ کن را چاہ درپیش" داعش دہشت گرد تنظیم کو امریکہ نے شام کے صدر بشار اسد کو گرانے کے لئے تشکیل دیا تھا لیکن داعش آج خود امریکہ کے لئے سب سے بڑا خطرہ بن گئی ہے۔شیخ نعیم قاسم نے کہا کہ امریکہ کسی بھی مسلمان ملک کا مخلص نہیں ہے امریکہ مشرق وسطی میں اسرائیلی مفادات کو تحفظ فراہم کررہا ہے اور اس سلسلے میں امریکہ کو سعودی عرب سمیت بعض عرب ممالک کی حمایت اور پشتپناہی حاصل ہے۔انھوں نے کہا کہ بشار اسد ایک مضبوط اور مؤثر صدر ہیں اور بشار اسد کے خلاف کوئی بھی اقدام درحقیقت شامی عوام کے خلاف اقدام ہے۔

پڑھا گیا 377 دفعہ

Leave a comment

شیعہ نسل کشی رپورٹ

Shia Genocide 2016

حلب میں داعش کو شکست

حلب شام میں داعش کو شکست فاش کی لمحہ بہ لمحہ خبریں

اسلام و پاکستان دشمن مفتی نعیم

Mufti Naeem

مقبوضہ کشمیر و فلسطین

مقالہ جات

حزب اللہ کیوں کھٹکتی ہے! ایاز میر

حزب اللہ کیوں کھٹکتی ہے! ایاز میر

حزب اللہ کے گناہوں کی فہرست بہت لمبی ہے۔ پہلی بات یہ کہ اُس کا تعلق شیعہ مسلک سے ہے۔ یہ امر بھی قابلِ معافی ہوتا اگر یہ لبنانی تنظیم اتنی جنگجو (milit...

Follow

Facebook

ڈیلی موشن

سوشل میڈیا لنکس

ہم سے رابطہ

ایمیل: This email address is being protected from spambots. You need JavaScript enabled to view it.

ویبسائٹ http://www.shiitenews.org