تازہ ترین

ابنِ زیاد کے کالے کرتوں سے پردہ اٹھ گیا، سانحہ ماڈل ٹاؤن کی رپورٹ منظر عام پر آگئی ۔

کیٹیگری پاکستان
Tuesday, 05 December 2017


شیعت نیوز: لاہور ہائی کورٹ کےفل بینچ کے حکم کے بعد پنجاب حکومت نے سانحہ ماڈل ٹاؤن پر باقر نجفی ٹربیونل کی رپورٹ عام کردی، رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ماڈل ٹاؤن آپریشن کی منصوبہ بندی وزیرقانون پنجاب کی نگرانی میں ہوئی، پولیس نے وہی کیا جس کے لئے اسے بھیجا گیا تھا۔ وزیراعلیٰ پنجاب کے آپریشن روکنے کے احکامات کا کوئی ریکارڈ پیش نہیں کیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق سانحہ ماڈل ٹاؤن کی تحقیقات کرنے والے جسٹس باقر نجفی ٹربیونل کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ رانا ثناء اللہ نے ڈاکٹر طاہر القادری کو اپنے مقصد میں کامیاب ہونے کیلئے موقعہ فراہم نہ کرنے کی رائے دی، ڈاکٹر توقیر شاہ نے وزیر اعلیٰ پنجاب کی ایماء پر منہاج القران سیکرٹریٹ سے بیریئر ہٹانے کی رضا مندی ظاہر کی، ڈی سی او لاہور کے مطابق ٹی ایم اے کا عملہ 16 جون 2014ء کو رات کے وسط تجاوزات ہٹانے پہنچا تو منہاج القران کے غضبناک ہجوم نے پولیس پر پتھراؤ شروع کردیا۔ پولیس نے جوابی طور پر فائرنگ کی جس کے نتیجے میں کئی لوگ زخمی ہوئے اور زخمیوں میں سے بعد میں کچھ لوگ جاں بحق ہوئے۔ڈی سی او لاہور نے رپورٹ میں کہا کہ غیر مسلح عوامی تحریک کارکنان سے پولیس کا ایسا برتاؤ سوچا نہیں جا سکتا تھا، رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ پولیس کو جانی نقصان کی پرواہ کئے بغیر ہر صورت میں بیرئر ہٹانے کی ہدایت تھی تاہم حالات و واقعات کے مطابق ٹربیونل کو سچ تک نہ پہنچنےدینا پنجاب حکومت کی خواہش تھی، آئی جی پنجاب اور ڈی سی او لاہور کی وقوعہ سے پہلے تبدیلی ٹربیونل کو حکومت کے خلاف رائے دینے کی جانب لےجاتی ہے۔ باقر نجفی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ وزیر اعلیٰ پنجاب کے بیان حلفی کے مطابق انہوں نے صبح ساڑھے نو بجے فوری طور پر پولیس کو آپریشن روکنے کا کہا، توقیر شاہ نے وزیر اعلیٰ کا حکم سیکرٹری داخلہ پنجاب اور وزیرقانون پنجاب تک پہنچا دیا لیکن وزیر اعلیٰ کے آپریشن روکنے کے احکامات کا ریکارڈ ٹربیونل کو پیش نہیں کیا گیا تمام حالات واقعات سے واضح ہے کہ وزیر اعلیٰ نے آپریشن روکنے کا کوئی حکم جاری نہیں کیا، یہاں تک کے واقعہ کے بعد وزیراعلیٰ کی پہلی پریس کانفرنس میں بھی کارروائی روکنے کا ذکر شامل نہیں تھا۔رپورٹ میں کہا گیا کہ وزیرقانون نے توقیر شاہ کو بتایا کہ موقعہ پر پولیس افسران کہتے ہیں جلد صورتحال پر قابو پا لیا جائیگا، ٹربیونل میں دیئے گئے بیان میں وزیرقانون نے آپریشن روکنے کے لفظ تک کا استعمال نہیں کیا، رانا ثناء اللہ کے بیان کے مطابق سیکرٹری ٹو وزیراعلیٰ نے معاملہ پرامن طریقہ سے حل کرنے کی ہدایت کی جبکہ پولیس افسران کے بیانات کے مطابق وزیر اعلیٰ کیطرف سے آپریشن روکنے کے احکامات نہیں ملے۔ باقر نجفی رپورٹ میں کہا گیا کہ ماڈل ٹاؤن آپریشن وزیرقانون کی نگرانی میں پلان کیا گیا، آپریشن کے نتیجے میں ہونے والی اموات سے بچا جاسکتا تھا، لوگوں پر فائرنگ اور تشدد ظاہر کرتا ہے کہ پولیس نے وہی کیا جس کیلئے اسے بھیجا گیا، باقر نجفی رپورٹ میں سانحہ ماڈل ٹاؤن میں کسی کو واضح طور ذمہ دار قرار نہیں دیا گیا تاہم کہا گیا ہے کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کے ذمےدار کا تعین رپورٹ پڑھ کر قاری خود کرسکتا ہے۔

پڑھا گیا 462 دفعہ

Leave a comment

شیعہ نسل کشی رپورٹ

Shia Genocide 2016

حلب میں داعش کو شکست

حلب شام میں داعش کو شکست فاش کی لمحہ بہ لمحہ خبریں

اسلام و پاکستان دشمن مفتی نعیم

Mufti Naeem

مقبوضہ کشمیر و فلسطین

مقالہ جات

مسئلہ فلسطین اور بانی پاکستان کا واضح موقف

مسئلہ فلسطین اور بانی پاکستان کا واضح موقف

بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح رہ کا 65 واں یوم وفات نہایت عقیدت و احترام کے ساتھ منایا گیا۔ اس موقع پر قائداعظم محمد علی مختلف طبقہ فکر سے تعلق...

Follow

Facebook

ڈیلی موشن

سوشل میڈیا لنکس

ہم سے رابطہ

ایمیل: This email address is being protected from spambots. You need JavaScript enabled to view it.

ویبسائٹ http://www.shiitenews.org