روس کی جانب سے کیمیائی حملوں کے امریکی الزامات مسترد

کیٹیگری دنیا
Tuesday, 17 April 2018


روس کے وزیر خارجہ سرگئی لاوروف نے کہا ہے کہ میں ضمانت دیتا ہوں کہ روس نے جائے وقوع سے شواہد مٹانے کی کوئی کوشش نہیں کی۔

کیمیائی ہتھیاروں کی نگرانی کرنے والی واچ ڈاگ (او پی سی ڈبلیو) میں شامل امریکی سفیر نے شامی شہر دوما میں جائے وقوع سے شواہد مٹانے کے حوالے سے اپنی تشویش کا اظہار کیا ہے کہ یہاں کام کرنے کے لیے اب بھی سیکیورٹی ایشوز موجود ہیں۔

کیمیکل حملے کے الزام کے بعد عالمی انسپکٹر شامی شہر دوما میں اس مقام تک پہنچنے کی کوشش کررہے ہیں جہاں کیمیکل حملہ ہوا ہے۔

او پی سی ڈبلیو میں شامل برطانوی نمائندے پیٹر ولسن نے دوما تک پہنچنے اور آزاد تحقیقات کرنے کا مطالبہ کیا ہے اور کہا ہے کہ روس کے اس الزام میں کوئی صداقت نہیں کہ برطانیہ کیمیائی حملوں کو اصلی ثابت کرنے میں امریکا کی مدد کررہا ہے۔

واضح رہے کہ 7 اپریل کو حملے کے وقت تک دوما شہر دہشتگردوں کا مضبوط گڑھ تھا تاہم اب وہ شامی حکومت کے کنٹرول میں ہے۔

ہفتے کو امریکا، فرانس اور برطانیہ نے شامی حکومت پر اپنے شہریوں پر کیمیائی حملوں کا الزام عائد کرتے ہوئے شامی شہروں حمص اور دمشق پر تین حملے کرکے کئی عمارتوں کو تباہ کردیا تھا۔

پڑھا گیا 107 دفعہ

Leave a comment

شیعہ نسل کشی رپورٹ

Shia Genocide 2016

حلب میں داعش کو شکست

حلب شام میں داعش کو شکست فاش کی لمحہ بہ لمحہ خبریں

اسلام و پاکستان دشمن مفتی نعیم

Mufti Naeem

مقالہ جات

Follow

Facebook

ڈیلی موشن

سوشل میڈیا لنکس

ہم سے رابطہ

ایمیل: This email address is being protected from spambots. You need JavaScript enabled to view it.

ویبسائٹ http://www.shiitenews.org