تازہ ترین

یمنی فوج اور عوامی رضاکار فورس،بیرونی جارحیت کا ڈٹ کر مقابلہ کر رہی ہے

کیٹیگری یمن
Monday, 09 July 2018


یمن کی عوامی تحریک انصاراللہ کے سربراہ نے کہا ہے کہ یمن پر جارحیت کا اصل مقصد بحیرہ احمر میں اور یمنی سواحل پر امریکی و صیہونی اہداف کا حصول اور ان کے سازشی منصوبوں کو آگے بڑھانا ہے۔

یمن کی عوامی تحریک انصاراللہ کے سربراہ عبدالملک بدرالدین الحوثی نے  تاکید کے ساتھ کہا ہے کہ دشمن، یمن کے مغربی ساحل میں الحدیدہ پر حملے و جارحیت کا جواز پیش کرنے کے لئے ہر طرح کا جھوٹ اور ہر قسم کا ہتھکنڈہ استعمال کر رہے ہیں جبکہ ان دشمنوں کا یمن پر جارحیت کا اصل مقصد اس ملک اور اس کے سواحل و بندرگاہوں پر غاصبانہ قبضہ جمانا ہے اور گذشتہ تین برسوں سے زائد عرصے سے یہ کوششیں جاری ہیں مگر ابتک وہ اپنا کوغی بھی مقصد حاصل نہیں کر سکے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ یمنی فوج اور عوامی رضاکار فورس، یمن کے سواحل اور مختلف علاقوں پر امریکہ اور اس کے آلہ کار ملکوں کے اتحاد کے وحشیانہ حملوں اور جارحیت کا ڈٹ کر مقابلہ کر رہی ہے۔

یمن کی عوامی تحریک انصاراللہ کے سربراہ نے کہا کہ یمن کے مغربی ساحل پر ہونے والی جنگ، پوری یمنی قوم پر مسلط کردہ جنگ ہے اور یمن کی ساری قوتیں مغربی ساحل پر عام شہریوں، عورتوں اور بچوں کے ہونے والے قتل عام کے مقابلے میں اپنا بھرپور کردار ادا کر رہی ہیں۔

انھوں نے کہا کہ مغربی ساحل پر دشمنوں کی شکست مکمل عیاں ہے اور اب یہ دشمن، ایسے دلدل میں پھنس چکے ہیں کہ جہاں سے ان کا باہر نکل پانا بھاری خمیازہ بھگتنے کے باوجود بہت مشکل ہے۔

عبدالملک بدرالدین الحوثی نے اسی طرح یمن کے خلاف سعودی اتحاد کی جارحیت کی مذمت اور یمنی عوام کی حمایت میں حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصراللہ کے مواقف کی قدردانی بھی کی۔

انھوں نے اپنے بیان میں تاکید کے ساتھ کہا کہ یمنی قوم، حزب اللہ لبنان اور اس کے سربراہ کے صداقت پر مبنی مواقف کو کبھی فراموش نہیں کرے گی۔

یمن کی عوامی تحریک انصاراللہ کے سربراہ نے کہا کہ حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصراللہ اپنے قول و فعل کے سچے، با اخلاق اور انسانی و اسلامی اقدار سے متعلق بہترین نمونہ شمار ہوتے ہیں۔

حزب اللہ لبنان کے سربراہ نے اپنے حالیہ ایک بیان میں سعودی اتحاد کی جارحیت کے مقابلے میں یمنی عوام کی استقامت کی طرف اشارہ کرتے ہوئے تاکید کے ساتھ کہا کہ سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کو جان لینا چاہئے کہ وہ ایسی بہادر قوم کے سامنے ہیں جو دشمنوں کے مقابلے میں سیسہ پلائی ہوئی دیوار کی مانند ڈٹی ہو ئی ہے اور کبھی سر تسلیم خم نہیں کرے گی۔

سید حسن نصراللہ نے یمنی فوج کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہے کہ اے کاش وہ بھی یمنی فوج کے شانہ بشانہ دشمنوں کے خلاف میدان جنگ میں ہوتے اور جنگ کرتے۔

قابل ذکر ہے کہ سعودی اتحاد نے امریکہ اور غاصب صیہونی حکومت کی مکمل حمایت سے علاقے کے غریب اسلامی عرب ملک، یمن کو مارچ دو ہزار پندرہ سے وحشیانہ جارحیت کا نشانہ بنا رکھا ہے اور اس ملک کا مکمل محاصرہ کر رکھا ہے جبکہ یمنی عوام پر مسلط کردہ اس جنگ کے نتیجے میں چودہ ہزار سے زائد یمنی شہری شہید اور دسیوں ہزار دیگر زخمی اور لاکھوں بے گھر ہو چکے ہیں۔

یہی نہیں بلکہ یمن کے جاری محاصرے کے نتیجے میں اس ملک کو دواؤں اور غذائی اشیا کی شدید قلت کا سامنا ہے اور ملک کی بنیادی تنصیاب بالکل تباہ ہو چکی ہیں پھر بھی اس ملک کے عوام نے دشمنوں کے سامنے سر تسلیم خم نہیں کیا ہے اور وہ ہر طرح کی جارحیت کا منھ توڑ جواب دے رہے ہیں۔

پڑھا گیا 342 دفعہ

Leave a comment

شیعہ نسل کشی رپورٹ

Shia Genocide 2016

حلب میں داعش کو شکست

حلب شام میں داعش کو شکست فاش کی لمحہ بہ لمحہ خبریں

اسلام و پاکستان دشمن مفتی نعیم

Mufti Naeem

مقبوضہ کشمیر و فلسطین

فلسطین کو آزاد ریاست کے طور پر تسلیم کرنے کا مطالبہ

فلسطین کو آزاد ریاست کے طور پر تسلیم کرنے کا مطالبہ

آسٹریا میں یورپی یونین کی چوٹی کانفرنس کے دوران اسپین کے وزیر خارجہ نے کہا کہ ہسپانوی حکومت یورپی یونین پر زور دے گی کہ وہ فلسطین کو بطور آزاد ریاست ت...

مقالہ جات

طاغوتی قوتوں کے خلاف جہاد، عاشورا کا سرمدی پیغام

طاغوتی قوتوں کے خلاف جہاد، عاشورا کا سرمدی پیغام

اگرچہ واقعہ عاشورا 61 ہجری میں پیش آیا لیکن چونکہ اس کا مقصد ایسی حکومت کے خلاف جہاد تھا جس کی بنیاد دھوکے، جھوٹ اور لالچ کی سیاست پر استوار تھی اور و...

Follow

Facebook

ڈیلی موشن

سوشل میڈیا لنکس

ہم سے رابطہ

ایمیل: This email address is being protected from spambots. You need JavaScript enabled to view it.

ویبسائٹ http://www.shiitenews.org