عراق

عراق:پر تشدد واقعات کے بوجود انتخابات میں عوام کی بھرپور شرکت

shiite_iraq_turn_out_electionعراق کے پارلیمانی انتخابات میںآج سات مارچ کو پولنگ کے اختتام پر عوام کی بھرپور شرکت کا رحجان سامنے آیا ہے جبکہ دوسری جانب پورے ملک میں دس سے زائد بم دھماکوں کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں جس کے نتیجہ میں اڑھتیس افراد جاں بحق اور ایک سو دس افراد ذخمی ہوئے ہیں۔شیعت نیوز کے نمائندے کی رپورٹ کے مطابق القاعدہ کی جانب سے دہشت گردانہ کاروائیوں کے باوجود اتوار کے روز پولنگ کے اختتام پر عراق کے دو کروڑ عوام نے انتخابات میں اپنے ووٹ کا حق استعمال کیا ہے ۔واضح رہے کہ القاعدہ کی جانب سے کی گئی دہشت گردانہ کاروائیوںمیں دس بم دھماکوں کے نتیجہ میں 38افراد جان بحق جبکہ 110شدید ذخمی ہو گئے ہیں۔عراق انتظامیہ نے سابق ڈکٹیٹر صدام ملعون کی بعث پارٹی پر عراق کے پارلیمانی انتخابات میں حصہ لینے پر پابندی عائد کر دی تھی۔یہاں یہ بات واضح رہے کہ عراقی پارلیمانی انتخابات میں چھ بڑے اتحادات کے 6200امید واروں کے درمیان 325نشستوں پر مقابلہ ہوا ہے ۔اقوام متحدہ کے مطابق انتخابات کے نتائج جمعرات سے آنا شروع ہو جائیں گے جبکہ آخری اور حتمی نتائج 18مارچ تک سامنے آئیں گے۔

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close