عراق

حکومت کی تشکیل کے لئے عراق کے شیعہ اتحاد مفاہمت کے قریب

shiite_iraq1عراق میں شیعہ جماعتوں کے  اتحاد عراقی نیشنل الائنس اور نوری المالکی کے   اتحاد حکومت قانون الائینس کے درمیان جلد ہی حکومت سازی کےبارےمیں اتفاق رائے ہوجانےکا امکان ہے۔

شیعت نیوز کے نمائندے کی رپورٹ کے مطابق ,عراقی نیشنل الائنس اور نوری المالکی کے  اتحاد حکومت قانون الائینس کے مابین مختلف مسائل پراتفاق رائےہوچکاہے اور یہ دونوں سیاسی اتحاد دوتین دنوں میں حکومت سازی کے لئے اتحاد کرلیں گے ۔ عراقی اخبار الصباح نے

 لکھاہے کہ مجلس اعلیٰ انقلاب اسلامی عراق کے سربراہ عمار الحکیم اور  وزیراعظم نوری المالکی مشترکہ اجلاس میں مشترکہ ورکنگ پروگرام پردستخط کریں گے۔

 

جبکہ زرئع کا کہنا ہے کہ عراقی شیعہ الا ئنس میں شامل ایک اہم جماعت مقتدی الصدر کی تنظیم جس نے انتخابات میںعراقی نیشنل الائنس کی کل حاصل کردہ 70  نشستوں میں سے 40 نشستیں حاصل کی ہیں،نے عراقی وزیر اعظم نوری المالکی کی دوبارہ وزیر اعظم کی حیثیت سے نامزدگی کی شدید محالفت کردی ہے۔

واضح رہے کہ نوری المالکی نے 2008میں امریکی فوجیوں کے ساتھ مل کر مقتدی الصدر کی مھدی ملیشیا کے خلاف اپریشن کیا تھا جس کے سبب 1200 سے زیادہ مھدی ملیشیا کےرہنما شہید ہوئے تھے۔ وزیراعظم  کی نامزدگی کے حوالے سے ہونے والے اختلاف کے باوجود عراقی نیشنل الائنس اور حکومت قانون اتحاد ائندہ ہونے والی ملاقات میں حکومت سازی کے حوالے سے معاہدے پر دستخط کرلیں گے۔

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close