کاپی رائٹ کی وجہ سے آپ یہ مواد کاپی نہیں کر سکتے۔
متفرقہ

دنیا بھر میں شہادت پیغمبر اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم اور امام حسن علیہ السلام کی مناسبت سے جلوس عزاء نکالے گئے۔

shiite_maryrdom

دنیا بھرمیں شہادت پیغمبر اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم اور امام حسن علیہ السلام کی مناسبت سے عزاداری کی گئی ،ایران،عراق،ترکی،کویت،لبنان،شام،پاکستان،ہندوستان،سمیت دنیا کے کئی ممالک میں شہادت پیغمبر اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم اور امام حسن علیہ السلام کی مناسبت سے مجالس عزا اور جلوس عزاداری کا اہتمام انتہائی عقیدت و احترام اور جوش وخروش سے کیا گیا،پورے ایران میں رسول اور نواسہئ رسول کا سوگ منایا گیااور ملک بھر میں جلوس عزا نکالے گئے جہاںکروڑوں عزاداروںنے امیر المومنین علی ابن ابی طالب علیہ السلام اور سیدہ فاطمۃ الزہرا سلام اللہ علیہا کو پرسہ دیا اور ہدیہ

 تعزیت پیش کیا۔شیعت نیوز کے نمائندے کے مطابق آج پورے ایران میں رسول اسلام حضرت محمد مصطفی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم اور آپ کے نواسے حضرت امام حسن علیہ السلام کا سوگ انتہائی عقیدت و احترام سے منایا جارہا ہے۔آج پورا ملک رسول اور نواسہئ رسول کے سوگ میں سیاہ پوش ہے اور اس مناسبت سے عزاداری کا سلسلہ کل رات سے ہی شروع ہوگیا تھا جو اس وقت بھی جاری ہے۔اس سلسلہ میں عزاداری دارالحکومت تہران سمیت تمام چھوٹے بڑے شہروں اور قریوں میں خاص اہتمام کے ساتھ ہورہی ہے لیکن مقدس شہر مشہد میں فرزند رسول حضرت امام رضا علیہ السلام کے روضہئ اقدس میں اس وقت دسیوں لاکھ عزادار مجلس و ماتم ، نوحہ خوانی اور سینہ زنی میں مصروف ہیں۔رسول اور نواسہئ رسول کی عزاداری میں شرکت کے لئے ایران کے مختلف علاقوں سے عزادار کئی دن کا راستہ پیدل طے کرکے مشہد مقدس پہنچے ہیں۔رسول اسلام صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے یوم رحلت اور آپ کے نواسے حضرت امام حسن علیہ السلام کی تاریخ شہادت کی مناسبت سے مذہبی شہر قم میں بھی عزاداری کا خاص اہتمام کیا گیا ہے۔ہمارے نمائندے کی رپورٹ کے مطابق حضرت معصومہئ قم سلام اللہ علیہا کا روضہئ مبارک جمعہ کی رات سوگواروں اور عزاداروں سے مملو رہا اور روضہئ مبار ک میں اس وقت بھی عزاداری کا سلسلہ جاری ہے۔تہران میں بھی رسول اور نواسہئ رسول کی عزاداری کا سلسلہ جمعہ کی رات سے ہی شروع ہوگیاتھا اور مختلف جگہوں پر اس وقت بھی جاری ہے۔بانی انقلاب اسلامی حضرت امام خمینی رحمت اللہ علیہ ، حضرت شاہ عبدالعظیم اور دیگر اہم اسلامی شخصیات کے روضوں میں عزاداروں نے جعمہ کی رات شب بیداری کی اور نماز صبح تک اس رات کی مخصوص دعاؤں ، مناجات ، عبادتوں ، عزاداری اور نوحہ خوانی میں مصروف رہے۔اسی طرح ایران کے تمام دیگر چھوٹے بڑے شہروں اور دیہاتوں میں بھی رسول اور نواسہئ رسول کی عزاداری کا سلسلہ جاری ہے۔ادھر کربلائے معلی ، کاظمین اور بغداد سمیت عراق کے شہروں میں بھی رسول اور نواسہئ رسول کی عزاداری جاری ہے لیکن نجف اشرف میں اس مناسبت سے عزاداری کا خاص اہتمام کیا گیا ہے۔جمعہ کی شام تک نجف اشرف میں تیس لاکھ سے زیادہ عزادار پہنچ چکے تھے اور عزاداروں کی تعداد میں آخری اطلاعات ملنے تک اضافہ ہورہا تھا۔نجف اشرف میں جمعہ کی رات دسیوں لاکھ زائرین نے رسول اسلام صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی مخصوص اجتماعی زیارت پڑھنے کے پروگرام میں شرکت کی اور ساری رات عزاداری اور دعا و مناجات میں بسر کی۔اس کے علاوہ لبنان ، شام ، قطر ، متحدہ عرب امارات ، سعودی عرب کے شیعہ آبادی کے علاقوں ، وسطی ایشیا کے ممالک ، افغانستان ، ہندوستان ، پاکستان اور متعدد مغربی ممالک میں بھی آج رسول اور نواسہئ رسول کا سوگ عقیدت و احترام سے منایا گیا۔دنیا بھر کی طرح پاکستان بھر میں بھی شہادت پیغمبر اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم اور امام حسن علیہ السلام کے موقع پر مجالس عزا برپا کی گئیں جبکہ ماتمی و تعزیتی جلوس عزا بھی برامد ہوئے۔شیعت نیوز کے نمائندے کے مطابق پاکستان کے تمام چھوٹے بڑے شہروں بشمول پشاور،کوہاٹ،پاراچنار،اسلام آباد،راولپنڈی،لاہور،گوجرانوالہ،جہلم،سیالکوٹ،فیصل آباد،ملتان،جھنگ،ڈیرہ اسماعیل خان،ڈیرہ غازی خان،بہاولپور،رحیم یار خان،صادق آباد،سکھر،لاڑکانہ،جیکب آباد،دادو،حیدرآباد،نواب شاہ کوئٹہ سمیت کراچی میں شہادت حضرت محمد صلی اللہ علیہ والہ وسلم اور امام حسن علیہ السلام کے موقع کی مناسبت سے مجالس عزاء برپا ہوئیں جن سے علمائے کرام اور خطبائے عظام نے خطاب فرمایا اور سیرت پیغمبر اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم اور فضائل اہلبیت علیھم السلام کے ساتھ ساتھ خانوادہ رسول صلی اللہ علیہ والہ وسلم پر ڈھائی جانے والی مصیبتوں کا تذکرہ بھی کیا ،بعد از مجالس ملک بھر کے شہروں اور دیہاتوں میں عزاداران پیغمبر اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم اور امام حسن علیہ السلام نے امیر المومنین حضرت علی ابن ابی طالب علیہ السلام اور دختر رسول اکرم جناب سیدہ فاطمۃ الزہرا سلام اللہ علیہا کو پرسہ اورتعزیت پیش کرنے کے لئے ماتمی اورتعزیتی جلوس نکالے،اور عزاداری برپا کی۔جلوس عزا میں عزاداروں نے تابوت امام حسن علیہ السلام اور تابوت پیغمبر اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم اٹھا رکھے تھے جبکہ علم حضرت عباس علیہ السلام بھی اٹھائے ہوئے تھے،جلوس عزاء اپنے مقررہ راستوں سے گذرتے ہوئے اپنے مقامات پر اختتام پذیر ہو گئے۔کراچی میں کل بروز جمعہ کو شہادت پیغمبر اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم اور امام حسن علیہ السلام کی مناسبت سے مرکزی جلوس عزاء نشتر پارک سے نکالاگیا جس میں شہر بھر سے ہزاروں عزاداروں نے شرکت کی اور امام علی علیہ السلام اوربی بی سیدہ فاطمۃ الزہرا سلام اللہ علیہا کو پرسہ پیش کیا ،جلوس عزاء اپنے مقرر راستوں سے گذرتا ہوا رات گئے مرکزی امام بارگاہ شاہ نجف مارٹن روڈ پر اختتام پذیر ہو گیا،اس موقع پرمختلف ماتمی انجمنوں اور اداروں کی طرف سے عزاداران پیغمبر اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم اور امام حسن علیہ السلام کے لئے جلوس کے راستوں میں سبیلوں اور نذر ونیاز کا اہتمام بھی کیا گیا تھا ۔واضح رہے کہ شہر کراچی میں محرم اور صفر میں ہونے والے پانچ دھماکوں کے بعد شہادت رسول خدا صلی اللہ علیہ والہ وسلم اور حضرت امام حسن علیہ السلام کے موقع پر سیکیوریٹی کے انتہائی سخت اقدامات کئے گئے تھے تا کہ کسی قسم کا کوئی نا خوش گوار واقعہ پیش نہ آئے۔

 

Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close