متفرقہ

اسرائیلی کی نابودی یقینی

CIAسی آئی اے نے اپنی ٹاپ سکریٹ رپورٹ میں کہا ہے کہ اسرائیلی حکومت کا آئندہ بیس برسوں میں کوئي نام ونشان نہيں رہے گا فلسطین الیوم نامی ویب سائٹ نے لکھا ہے کہ اس خفیہ رپورٹ کے مطابق جودنیا کی بعض بہت ہی مشہور ویب سائٹوں پرشائع ہوچکی ہيں سی آئی اے کواب اسرائیل کی حیات اوربقاء پریقین نہیں رہ گیا ہےسی آئی اے کی اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ جب تک انیس سواڑتالیس اورانیس سو سڑسٹھ کے فلسطینی پناہ گزینوں کوان کے وطنواپس آنے کی اجازت نہيں دے دی جاتی فلسطین کا پائیدار اورپرامن حل ممکن نہيں ہوگا  ۔سی آئی اے کی اس خفیہ رپورٹ میں جو معدودے چند افراد کوباخبر کرنے کے لئے تیار کی گئی تھی کہا گیا ہے کہ فلسطینی پناہ گزین اپنی سرزمینوں کولوٹ آئیں گے اورپھر اس کے نتیجے میں مقبوضہ سرزمینوں سے جہاں اسرائیل نے ناجائزطریقے سے صہیونیوں کوآباد کرایا ہے بیس لاکھ صہیونیوں کی واپسی کا  عمل شروع ہوجائے گا۔ اس وقت بھی تقریبا پانچ لاکھ صہیونی، جومقبوضہ علاقوں میں لاکر بسائے گئے ہيں امریکی ریاست کیلیفرنیا جانے کے لئے پاسپورٹ اپنے ہاتھوں میں لئے تیار بیٹھے ہيں لیکن کیلفرنیا میں صرف تین لاکھ افراد کوبسانےکی گنجائش موجود ہے ۔ بین الاقوامی امورکے ماہر فرینکین لیمپ کا کہنا ہے کہ ان صہیونیوں نے لاکھ جتن کرکے جوپاسپورٹ حاصل کئے ہيں اس کی وجہ یہی ہے کہ وہ اسرائیل کے انجام سے باخبرہيں ۔ سی آئی اے کی اس تازہ ترین رپورٹ میں کہا گيا ہے کہ باقی پندرہ لاکھ  صہیونی بھی روس اوریورپ کے ديگرملکوں میں منتقل ہوجائيں گے ۔یاد رہے کہ امریکی خفیہ ایجنسی سی آئی اے نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ اسرائیل کی سرزمین موعود کا خواب کبھی بھی شرمندہ تعبیر نہیں ہوسکتا جلد یا دیر اس کا خواب چکنا چور ہوجائے گا ۔

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close