پاکستان

کراچی:ناصبی دہشت گردوں کی فائرنگ۔شیعہ رینجر اہلکار سہیل عباس شہید

martyrکراچی میں جاری ملت جعفریہ کی ٹارگٹ کلنگ میں ایک اور شیعہ رینجر اہلکار سہیل عباس (38سالہ)شہید ہو گیا۔شیعت نیوز کے نمائندے کی رپورٹ کے مطابق کالعدم دہشت گرد تنظیم سپاہ صحابہ کے ناصبی دہشت گردوں کی فائرنگ سے شو مارکیٹ کے علاقے میں بس اسٹاپ پر کھڑا ہو شیعہ نوجوان  سہیل عباس (38سالہ)شہید ہو گیا۔
سہیل عباس کا تعلق پاکستان رینجرز سے تھا ،اور شہید سہیل عباس رینجرز ہیڈ کوارٹر میں کلرک کے فرائض انجام دیا کرتا تھا،عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ شہید سہیل عباس اپنے دفتر سے کام ختم کرنے کے بعد گھر جانے کے لئے شو مارکیٹ گارڈن تھانے کی حدود میں بس اسٹاپ پر کھڑا بس کا انتظار کر رہا تھا کہ کالعدم دہشت گرد سپاہ صحابہ کے دہشت گردوں نے جو کہ موٹر سائیکل پر سوارتھے فائرنگ کر کے شہید کر دیا،شہید سہیل عباس دو بچوں کا باپ تھا ۔
واقع کے فوراً بعد پولیس حکام جائے وقعہ پر پہنچ گئے اور رینجرز حکام کو سہیل عباس کی شہادت کی اطلاع دی جس کے بعد شہید کے جسد خاکی کو سول اسپتال منتقل کیا گیا،شہید سہیل عباس حسن عسکری ولیج کا رہائشی تھا جبکہ شہید کا آبائی تعلق چکوال شہر سے تھا،پولیس کا کہنا ہے کہ شہید سہیل عباس کی شہادت شہر میں جاری مسلسل ٹارگٹ کلنگ کا ایک حصہ ہے ۔واضح رہے کہ شہید کے جسد خاکی کو تدفین کے لئے جمعرات کے روزان کے آبائی شہر چکوال روانہ کر دیا گیا ہے۔
یہ بات قابل ذکر ہے کہ ایک طرف تو کالعدم دہشت گرد گروہوں سپاہ صحابہ اور لشکر جھنگوی کے ناصبی دہشت گردوں کے ہاتھوں ملت جعفریہ کے بے گناہ افراد کو دہشت گردی کا نشانہ بنایا جا رہا ہے جبکہ دوسری جانب حکومت اورو پولیس انتظامیہ سمیت قانون نافذ کرنے والے ادارے قاتلوں کی گرفتاری میں تاحال ناکام نظر آ رہے ہیں،ایسا محسوس ہوتا ہے کہ شہر میں جاری ٹارگٹ کلنگ میں حکومتی شخصیات اور پولیس کے اعلیٰ افسران شامل ہیں۔

Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close