پاکستان

بے گناہ نوجوانوں کی گرفتاریاں بند کی جائیں ،چہلم امام حسین علیہ السلام پر انتہائی اقدامات کا اعلان کر سکتے ہیں۔

mwm2

بے گناہ نوجوانوں کی گرفتاریاں بند کی جائیں ،چہلم امام حسین علیہ السلام پر انتہائی اقدامات کا اعلان کر سکتے ہیں۔ان خیالات کا اظہار مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے رہنما علامہ راجہ ناصر عباس نے جمعہ کو پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہا کہ سانحہ عاشور میں ملوث اصل ملزمان کا چہرہ بے نقاب کیا جائے اور سانحہ عاشور میں شہید ہونے والوں کے لواحقین کو سرکاری ملازمتیں دی جائیں،

انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ سانحہ عاشور کی اعلیٰ سطحی تحقیقات کرائی جائیں اور عدالتی کمیشن قائم کیا جائے انہوں نے حکومت کو متنبہ کرتے ہوئے کہا کہ اگر بے گناہ شیعہ نوجوانوں کو چہلم امام حسین علیہ السلام سے قبل رہا نہ کیا گیا اور گرفتاریوں کا سلسلہ بند نہ کیا گیا تو چہلم امام حسین علیہ السلام پر انتہائی اقدامات کا اعلان کر سکتے ہیں۔ رہنما مجلس وحدت مسلمین پاکستان کا کہنا تھا کہ پاکستان دنیا کا واحد اسلامی ایٹمی ملک ہے اور اسلام دشمن قوتیں پاکستان میں سیاسی ابتری اور بے چینی پھیلا کر پاکستان کے ٹکڑے ٹکڑے کرنا چاہتی ہیں ،ہم سمجھتے ہیں کہ عاشور کے جلوس میں دھماکا کرنے والے اور بعد میں جلاؤ گھراؤ میں ملوث ایک ہی گروہ کے لوگ ہیں ،انہوں نے مطالبہ کیا کہ سانحہ عاشور میں ملوث گروہ کو فوری طور پر بے نقاب کیا جائے ،اور شہدائے سانحہ عاشور کے ورثاء کو با عزت معاوضہ دیا جائے ،انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ سانحہ عاشور میں شہید ہونے والوں کے ورثاء کو سرکاری ملازمتیں دی جائیں ،پورے ملک بالخصوص پارا چنار،ڈیرہ اسماعیل خان،ہنگو اور کوئٹہ میں ملت جعفریہ کو تحفظ فراہم کیا جائے اور ان علاقوں میں ٹارگٹ کلنگ اور دہشت گردی میں ملوث عناصر کو گرفتار کر کے عبرت ناک سزا دی جائے۔

 

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close