مشرق وسطی

امریکی سعودی نواز تکفیری دہشتگرد گروہ داعش نے سینکڑوں خواتین سربازار نیلام کر دیں

عراق اور شام دہشتگردی اور ظلم و بربریت کی انتہاء کرنے والے امریکی سعودی نواز تکفیری دہشتگرد گروہ داعش کا ایک نیا اور انسانیت سوز اور ظالمانہ اقدام سامنے آ گیا۔ عراق میں اپنے زیر قبضہ شہر موصل میں تکفیری دہشتگرد گروہ داعش نے سنجار کے علاقے سے یرغمال بنائی گئی یزدی قبیلے کی 700 خواتین کو سربازار بولی لگا کر نیلام کر دیا، ایک خاتون کی کم سے کم قیمت 150 ڈالر مقرر کی گئی۔ العربیہ کے مطابق نینویٰ کے پہاڑوں میں پھنسے ہزاروں ترکمانی، عیسائی اور یزدی برادری کے افراد تکفیری دہشتگرد گروہ داعش کے خود ساختہ شرعی قوانین کا سامنا کر رہے ہیں۔ تکفیری دہشتگرد گروہ داعش کے زیر قبضہ علاقوں میں خواتین کے گھروں سے باہر نکلنے، ملازمت کرنے اور ٹی وی دیکھنے پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔ عالمی میڈیا رپورٹس کے مطابق شمالی عراق میں تکفیری دہشتگرد گروہ داعش کا خوف پھیلا ہوا ہے۔ تکفیری دہشتگرد ان علاقوں میں غیر مسلموں کو پکڑ کر انہیں جبری طور پر مسلمان کر رہے ہیں جبکہ پیسوں کیلئے انہیں فروخت بھی کر دیا جاتا ہے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close