پاکستان

فرقہ واریت پھیلانے والوں کے خلاف جنگ کرنا ہوگی،علامہ کمیلی

کراچی میں سیاسی و مذہبی جماعتوں نے شہرکو اسلحہ سے پاک کرنے کےلیے ضرب عضب طرز کے آپریشن کا مطالبہ کردیا ۔ کراچی میں جعفریہ الائنس پاکستان کے زیراہتمام آرٹس کونسل میں کُل جماعتی کانفرنس منعقد کی گئی جس میں پیپلزپارٹی، ایم کیوایم ، جے یو پی سمیت دیگر سیاسی اور مذہبی جماعتوں کے رہنماوٴں نے شرکت کی۔ اے پی سی سے خطاب میں پیپلز پارٹی کے رہنما تاج حیدر کا کہنا تھا کہ جمہوریت اور عسکریت پسندی ساتھ ساتھ نہیں چل سکتی ۔کانفرنس میں متحدہ قومی موومنٹ کے رہنما حیدر عباس رضوی نے کہا ہے کہ کراچی میں کوئی فرقہ واریت نہیں ہے بعض عناصر شہر میں فرقہ وارانہ فسادات پھیلانے کی کوشش کررہے ہیں۔کانفرنس میں جمعیت علما ئے پاکستان کے اویس نورانی نے معتصبانہ لٹریچر پر پابندی عائد کرنے کا مطالبہ کیا۔جعفریہ الائنس پاکستان کے سربراہ علا مہ عباس کمیلی نے اپنے خطاب میں کہا کہ تعصب اور فرقہ واریت پھیلانے والوں کے خلاف جنگ کرنا ہوگی۔آل پارٹیز کانفرنس میں مجلس وحدت مسلیمین ،پاکستان تحریک انصاف،عوامی نیشنل پارٹی، جماعت اسلامی ،اقلیتی برادری کے نمائندوں کے علاوہ سابق سربراہ سی پی ایل سی جمیل یوسف نے بھی خطاب کیا۔کانفرنس کے اختتام پرشہرمیں امن وامان کے قیام کےلیے تمام جماعتوں کے نمائندوں پر مشتمل مشترکہ کمیٹی تشکیل دینے اورنئی سی پی ایل سی بنانے کی قرار داد یں بھی منظور کی گئیں۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close