مقبوضہ فلسطین

عرب ملکوں کا اسرائیل سے تعاون، اسرائیلی عہدیدار کا اعتراف

صہیونی حکومت کے ایک فوجی عہدیدار نے انکشاف کیا ہے کہ بعض عرب ممالک نے بیت المقدس میں فلسطینیوں کے مظاہرے اور احتجاجات کی آگ کو ٹھنڈا کرنے کے لئے اسرائیل کی مدد کی ہے۔ قدس نٹ کی نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق صہیونی حکومت کی وزارت جنگ کے سیاسی اور سکورٹی ادراے کے سربراہ عاموس گلعاد نے ریڈیو اسرائیل کے ساتھ گفتگو میں کہا کہ بعض عرب ملکوں نے بیت المقدس میں احتجاجات اور مظاہروں کو ٹھنڈا کرنے کے لئے، وسیع پیمانے پر اسرائیل کی سیاسی اور سفارتی مدد کی ہے ۔ گلعاد نے عرب ملکوں سے جانب سے دباؤ کے سبب اپنا نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ عرب ملکوں کی امداد کے ساتھ ہی، اسرائیل فوج کی جانب سے فلسطینیوں کی وسیع پیمانے پرگرفتاریوں ، مسجد الاقصی سے ان کو دربدر کرنے اور گھروں کو مسمار کرنے کے نتیجے میں، بیت المقدس ميں جاری مظاہروں اور احتجاجات میں کمی آئی ہے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close