عراق

عراق، فلوجہ میں ہزاروں دہشت گردوں کی ہلاکت

عراق کے مغربی صوبے الانبار میں شہر فلوجہ کو آزاد کرائے جانے کی کارروائی کے آغاز سے اب تک کم از کم ڈھائی ہزار دہشت گرد ہلاک ہو چکے ہیں۔

شہر فلوجہ کے آپریشنل کمانڈر عبدالوہاب الساعدی نے ایک بیان میں کہا ہے کہ فلوجہ میں ڈھائی ہزار داعشی دہشت گردوں کی ہلاکت کے ساتھ ہی عراق کی سیکورٹی فورسز نے داعشی دہشت گردوں کے خلاف مہم اور انھیں اس شہر سے نکال باہر کرنے میں بڑی کامیابی حاصل کرلی ہے۔ عبدالوہاب الساعدی نے کہا کہ سیکورٹی فورسز نے فلوجہ کے مرکزی علاقوں پر کنٹرول حاصل کر لیا ہے اور وہ دہشت گردوں کے قبضے سے آزاد کرائے جانے والے علاقوں سے بارودی سرنگوں کا صفایا کر رہی ہیں۔ عراق کے اس فوجی کمانڈر نے کہا کہ فوجی یونٹوں کے ساتھ عوامی رضاکار سیکورٹی دستے، شہر فلوجہ کے شمالی علاقے میں داعش دہشت گرد گروہ کے مورچوں کو تباہ کرتے ہوئے شہر میں داخل ہونے میں کامیاب ہو گئے ہیں۔ عبدالوہاب الساعدی نے کہا کہ شہر فلوجہ کے مغربی علاقے میں دہشت گردوں کے خلاف وسیع پیمانے پر کارروائی جاری ہے جبکہ جنوبی علاقے میں عراقی سیکورٹی فورسز نے داعش دہشت گرد گروہ کی پانچ دفاعی لائنوں کو توڑتے ہوئے اپنی پیش قدمی کا سلسلہ جاری رکھا ہے۔ واضح رہے کہ عراق کے وزیر اعظم حیدر العبادی نے سترہ جون کو اعلان کیا ہے کہ عراق کی سیکورٹی فورسز، داعش دہشت گرد گروہ کے خلاف چار ہفتوں کی شدید جھڑپوں کے بعد فلوجہ شہر کے مرکزی علاقے میں داخل ہو گئی ہیں۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close