پاکستان

ویب سائٹس لائسنس یافتہ ہیں نہ سوشل میڈیاکنٹرول کرسکتے ہیں،چیئرمین پی ٹی اے

شیعیت نیوز: چیئرمین پی ٹی اے اسماعیل شاہ نے پبلک اکائونٹس کمیٹی کاپر واضح کر دیا ہے کہ پاکستان میں سوشل میڈیا کو کنٹرول نہیںکیا جاسکتا ،سوشل میڈیا ویب سائٹس ہماری لائسنس یافتہ نہیں، ملک میں موبائل صارفین کی تعداد 14 کروڑ اور موبائل براڈ بینڈ صارفین کی تعداد 4 کروڑ 21 لاکھ سے تجاوز کرگئی ہے، کمیٹی نےپی ٹی سی ایل ملازمین کی پنشن، پراپرٹی اور جبری ریٹائرمنٹ کی تمام تفصیلات بھی طلب کر لیں ، خورشید شاہ کی زیر صدارت پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں چیئرمین پی ٹی اے اسماعیل شاہ نے ادارہ کی کارکردگی پر بریفنگ دیتے ہوئے کہاکہ ملک کے 72 اعشاریہ 4 فیصد حصے میں ٹیلی کام سروسز دستیاب ہیں،سی پیک کے تحت راولپنڈی سے خنجراب تک 820 کلومیٹر کی فائیبر آپٹک بچھائی جا رہی ہے،پاکستان میں اسوقت پانچ سب میرین کیبلز استعمال ہو رہی ہیں۔موبائل براڈ بینڈ کے باعث پاکستان میں پہلا برانچ لیس بینک سم قائم ہو گیا ہے،موبائل براڈ بینڈ صارفین کی تعداد میں 185 فیصد سالانہ کے حساب سے اضافہ ہو رہا ہے۔ اسوقت سالانہ 74 ہزار ٹیرا بائیٹ ڈیٹا استعمال ہو رہا ہے۔ موبائل فونز کی چوریاں کم کرنے کیلئے نیا سسٹم لایا جا رہا ہے جس سےچوری شدہ موبائل فونز کا آئی ایم ای آئی نمبر تبدیل ہو بھی جائے تو استعمال نہیں ہو سکے گا۔موبائل کمپنیوں کو مشترکہ ٹاورز استعمال کرنے کا پابند بنایا جائے گاانہوںنے بتایاکہ اوبر اور کریم ٹیکسی سروس کی کامیابی موبائل براڈ بینڈ کی مرہون منت ہے۔ہمیں احساس ہے کہ جدید ٹیکسی سروس سے عام ٹیکسی ڈرائیور متاثر ہو رہے ہیں۔ ٹیکسی ڈرائیورز کو بھی اس سروس میں شمولیت کا موقع دیا جائے گا۔ انہوں نے آڈٹ اعتراضا کے حوالے سے بتایاکہ بند ہو جانے والی ٹیلی کام کمپنی انسٹا فون کے ذمہ 22 ارب روپے واجب الادا ہیں۔ کمیٹی نے پی ٹی اے کے 1990 سے زیر التوا آڈٹ اعتراضات ذیلی کمیٹی کے سپرد کر دیئے ۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close