پاکستان

مولانا فضل الرحمٰن وہ دلہن ہے جو حکومت کی گود میں بیٹھ جاتی ہے، ڈاکٹر اشرف آصف جلالی

شیعیت نیوز: تحریک لبیک یارسول اللہ کے مرکزی چیئرمین ڈاکٹر اشرف آصف جلالی نے کہا ہے کہ آصف زرداری، نواز شریف اور عمران خان کھوٹے سکے ہیں، اقتدار پر آکر ایک حکمران امریکہ کے اشارے پر ناچتا ہے، تو دوسرا باری کے لئے پر تولتا ہے، تحریک لبیک یا رسول اللہ نے عام انتخابات میں بھرپور حصہ لینے کے لئے نظام مصطفٰی مہم شروع کر دی ہے، نظام مصطفٰی متحدہ محاذ میں اکٹھے ہیں، موجودہ حکومت نے ختم نبوت کے قانون میں ترمیم کی کوشش کر کے عوام کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی، رانا ثناءاللہ کی قادیانیوں کی حمایت کرنے کی سزا 90 سال بنتی ہے لیکن وہ حکومت کی گود میں بیٹھا ہے۔ ملتان کی این اے 155 پر مولانا عبدالعلیم جلالی الیکشن لڑیں گے، جبکہ دیگر سیٹوں پر بھی امیدوار کھڑے کریں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ملتان پریس کلب میں دیگر رہنمائوں کے ہمراہ پریس کانفرنس کے دوران کیا۔ اس موقع پر تحریک لبیک یارسول اللہ جنوبی پنجاب کے امیر مولانا عبدالعلیم جلالی، جمیعت علماء پاکستان کے صوبائی نائب صدر مولانا عاشق علی قادری، مرتضٰی علی ہاشمی صدیقی، محمد جاوید جلالی بھی موجود تھے۔ ڈاکٹر اشرف آصف جلالی نے مزید کہا کہ تحریک لبیک یا رسول اللہ کی سیاسی جماعت کی حیثیت سے رجسٹریشن بالکل آخری مراحل میں ہے، انشاءاللہ عام انتخابات کے نتیجے میں یہی جماعت پارلیمنٹ میں موثر نمائندگی کرے گی، حکومت 3 نومبر 2017ء کو ہونے والے معاہدے پر عملدرآمد کراتے ہوئے حلف نامہ ختم نبوت میں تبدیلی کے ذمہ داروں کو بےنقاب کرکے سزا دے اور قادیانیوں کی شرانگیزیوں کو روکنے کے لئے قومی کونسل برائے ختم نبوت کا نوٹیفیکیشن جاری کرے۔ انہوں نے کہا کہ امریکہ کو ہمارے نظام سے تکلیف نہیں، نظام مصطفٰی کے نفاذ سے تکلیف ہے، ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ مولانا فضل الرحمٰن وہ دلہن ہے جو حکومت کی گود میں بیٹھ جاتی ہے، ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ سنی ووٹ تقسیم نہ ہو۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close