عراق

اربعین حسینیؑ: کروڑوں زائرین کی کربلا آمد

شیعیت نیوز:کربلا میں اربعین حسینی کے موقع پرکروڑوں زائرین پہنچ چکے ہیں جن میں عورتیں ، بچے اور سن رسیدہ افراد بھی شامل ہیں۔اربعین حسینی میں شرکت کرنے کیلئے دنیا بھر سے عوام کا ٹھاٹیں مارتا ہوا سمندر کربلا میں موجود ہے اور زائرین کی تعداد میں بدستوراضافہ ہو رہاہے۔کربلا میں اس وقت ہر جگہ عزاداری ہو رہی ہے اور زائرین سینہ زنی اور نوحہ خوانی کر کے اشک غم بہا رہے ہیں۔اربعین حسینی کے موقع پر سیکورٹی کے انتظامات اور امن و امان کو یقینی بنانے کے لئے چالیس ہزار سیکورٹی اہلکار تعینات کئے گئے ہیں۔قابل ذکر ہے کہ نواسۂ رسولۖ حضرت امام حسین (ع) اور آپ کے اصحاب باوفا کے چہلم کے موقع پر ہرسال پوری دنیا سے کروڑوں کی تعداد میں مکتب اہلبیت کے پیروکار حسینی زائرین کربلائے معلی پہنچتے ہیں۔اربعین مارچ کی روایت صدیوں پرانی ہے اور عاشقان اہلبیت اطہار علیہم السلام صدیوں سے اربعین کے موقع پر نجف اشرف سے کربلائے معلی تک پیدل چلتے تھے لیکن پچھلے چند برسوں سے اس مارچ نے آفاقی شکل اختیار کر لی ہے اور دنیا کا شاید ہی کوئی ملک ایسا ہو گا جہاں سے زائرین اور عاشقان اہلبیت اطہار اربعین مارچ میں شرکت کے لئے عراق نہ پہنچتے ہوں-ایران کے ہمسایہ ملکوں پاکستان، افغانستان، جمہوریہ آذربائیجان، ترکی اور دیگر ملکوں کے دسیوں ہزار زائرین کیلئے جو ایران کے راستے عراق روانہ ہوئے ہیں ایران میں جگہ جگہ موکب یعنی سبیل قائم کئے گئے ہیں اور ان کے قیام و طعام کا شاندار انتظام کیا گیا ہے-عراقیوں کے ساتھ ایران، پاکستان ، ہندوستان، کویت، بحرین، لبنان اور حتی سعودی عرب کے بھی شیعہ مسلمانوں کے موکب زائرین کی خدمت کے لئے لگائے گئے ہیں-نجف اور کربلا سے موصولہ خبروں میں کہا گیا ہے کہ اربعین ملین مارچ میں خاصی تعداد غیر مسلموں کی بھی ہے جبکہ اہل سنت بھائی بھی بڑی تعداد میں ملین مارچ میں حصہ لے کر شہدائے کربلا کو اپنے مخصوص انداز میں نذرانہ عقیدت پیش کر رہے ہیں۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close