مقبوضہ فلسطین

اسرائیلی دہشت گردی جاری ،غرب اردن میں مزید تین فلسطینی شہید

مقبوضہ بیت المقدس (مانیٹرنگ ڈیسک)قابض صہیونی فوج نے فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے کے شمالی شہر نابلس میں ریاستی دہشت گردی کا مظاہرہ کرتے ہوئے تین فلسطینیوں کو گولیاں مار کر شہید کر دیا۔منگل کو اسرائیلی فوج نے نابلس میں حضرت یوسف علیہ السلام کے مزار کے قریب دو فلسطینی نوجوانوں کو گولیاں مار کر شہید کیا۔ قبل ازیں صہیونی فوج نے رام اللہ میں ایک جھڑپ میں فدائی فلسطینی نوجوان عمر ابو لیلیٰ کو شہید کر دیا تھا۔

مقامی ذرائع نے بتایا کہ اسرائیلی فوجیوں‌ نے حضرت یوسف علیہ السلام کے مزار کے قریب سے گذرنے والی ایک گاڑی پر اندھا دھند فائرنگ کی جس کے نتیجے میں دو فلسطینی نوجوان شہید ہوگئے۔ادھر فلسطینی وزارت صحت نے بھی اسرائیلی فوج کی وحشیانہ کارروائی میں دو فلسطینیوں کی شہادت کی تصدیق کی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اسرائیلی فوجیوں‌ نے نابلس میں فائرنگ سے زخمی ہونے والے شہریوں کی مدد کو آنے والی ایمبولینس پر بھی فائرنگ کی۔ شہید ہونے والے فلسطینیوں کی شناخت 21 سالہ راید ھاشم محمد حمدان اور 20 سالہ زید عماد محمد نوری کے ناموں سے کی گئی ہے۔

قبل ازیں منگل کی شام اسرائیلی فوج نے رام اللہ میں عبوین کے مقام پر ایک کارروائی میں عمر ابو لیلیٰ کو گولیاں مار کر شہید کر دیا تھا۔ عمر ابو لیلیٰ پر الزام تھا کہ اس نے اتوار کے روز سفلیت میں مزاحمتی کارروائی کے دوران تین یہودیوں کو ہلاک اور متعدد کو زخمی کر دیا تھا

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close