سعودی عرب

آل سعود کی کورونا کے شور میں سیاسی مخالفین کی گرفتاریاں

شیعت نیوز : سعودی عرب میں آل سعود حکومت کی کورونا کے ہنگامے میں سیاسی مخالفین کی گرفتاری کا سلسلہ تیز ہوگیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : کورونا وائرس کے پھیلاؤ میں سعودی عرب کا کردار حصہ دوم

ٹوئٹر پر اظہار رائے کے قیدی کے نام سے فعال بیچ کے مطابق سعودی عرب میں پچھلے چند روز کے دوران مزید نو افراد کو گرفتار کیا گیا ہے جن میں کچھ صحافی اور سیاسی کارکن بھی شامل ہیں۔

یہ گرفتاریاں ایسے وقت میں عمل میں لائی جا رہی ہیں جب سعودی عرب کی رائے عامہ کورونا وائرس کے حوالے سے جاری معاملات میں الجھی ہوئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں : آئی جی پنجاب کا صوبے بھرمیں تبلیغی جماعت کے ارکان اور انکے اہل خانہ کو قرنطینہ کرنے کا حکم

بعض خبروں کے مطابق سعودی دربار سے وابستہ افراد نے اپنے ٹوئٹس میں سوشل میڈیا پر کھل کر اپنے خیالات کا اظہار کرنے والے معروف سعودی شہریوں کو دھمکیاں بھی دی ہیں۔

دوسری جانب بین الاقوامی اداروں اور انسانی حقوق کی تنظیموں نے دنیا میں قیدیوں کے درمیان کورونا وائرس کے پھیلاؤ پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے ان کی رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : یمن: سعودی اتحاد کے 19حملے، یمنی فورسز کا مغربی پہاڑیوں پر مکمل کنٹرول

سعودی عرب میں بن سلمان کے اقتدار میں آنے کے بعد سے سیاسی مخالفین کے خلاف کریک ڈاؤن میں شدت پیدا ہوئی ہے اور اب تک دسیوں صحافیوں، علمائے کرام، شعرا اور انسانی اور شہری حقوق کے لیے آواز بلند کرنے والوں کو گرفتار اور ان میں سے بہت سوں کو سزائے موت بھی دی جا چکی ہے۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close