یمن

عدن میں سعودی عرب اور امارات کے درمیان اختلافات اپنے عروج پر ہیں

شیعت نیوز: یمنی انقلابی کونسل کے سربراہ محمد علی الحوثی نے اپنے ایک بیان میں اس بات پر زور دیا ہے کہ جنوبی یمن کے حالات سے واضح ہوتا ہے کہ عدن میں سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کے درمیان شدید اختلافات اب اپنے عروج پر ہیں۔

انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ جارح سعودی اتحاد کے اس بیان سے کہ یمنی مقبوضہ علاقے عدن کا کنٹرول اب متحدہ عرب امارات کے بجائے سعودی عرب خود اپنے ہاتھ میں لے لے گا، یہ واضح ہو جاتا ہے کہ دونوں فریقوں کے درمیان موجود شدید اختلافات اب اپنے عروج پر پہنچ چکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : سعودی فوجی اتحاد کی جانب سےیمن میں عصمت درّی کےواقعات میں اضافہ باعث تشویش

یمنی انقلابی کونسل کے سربراہ محمد علی الحوثی نے کہا کہ عدن میں اب سعودی فوجیوں کی موجودگی اس بات کا پتہ دیتی ہے کہ وہاں موجود کشمکش جارح ممالک کے لئے لڑنے والے کرائے کے قاتلوں کے درمیان نہیں بلکہ دراصل دونوں اتحادی ممالک کے اعلی حکام کے درمیان تھی۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے خیال میں اس کشمکش کے دوران سعودی عرب نے متحدہ عرب امارات پر غلبہ پا لیا ہے جبکہ ابوظہبی کو عدن میں ہونے والی اس اپنی اس ذلت سے سبق سیکھنا چاہئے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close