اہم ترین خبریںپاکستان

قانون کے ساتھ مزاق ! قومی سلامتی کا دشمن آفتاب نظیر ساتھیوں سمیت گرفتاری کے بعد ضمانت پر رہا

ایک جانب ہمارے ریاستی ادارے کہہ رہے ہیں کہ ہمارے دشمن بھارت ملک میں سوشل میڈیا کے ذریعے شیعہ سنی میں اختلاف ڈالنے میں مصروف ہے اور امریکہ 100ملین ڈالر پاکستان میں فرقہ وارانہ فسادات کے لئے تقسیم کرچکا ہے جبکہ یہی ریاستی ادارے ویڈیو ثبوتوں کے باجود پاکستان میں دھندناتے پھرتے اس بھینسے آفتاب نظیر کو لگام ڈالنے سے خوفزدہ نظر آرہے ہیں ۔

شیعیت نیوز: قانون کے ساتھ مزاق !قومی سلامتی کا دشمن، کالعدم دہشت گرد تنظیم سپاہ صحابہ سے وابستہ اور سوشل میڈیا پر فرقہ وارانہ اور اشتعال انگیز ویڈیوز بنانے کی وجہ سے مشہور آفتاب نظیر اور اس کے شرپسند ساتھی گرفتاری کے بعد ضمانت پر آزاد، گزشتہ روز ملتان میں شیعہ مخالف جلسے کے بعدخفیہ اداروں کے ہاتھوں لاپتہ ہونے والے آفتاب نظیراور اس کے ساتھیوں کو آج ملتان ہائی کورٹ میں پیش کیا گیا جہاں عدالت نے اس کی ضمانت منظور کرتے ہوئے رہا کرنے کا حکم جاری کردیا۔

تفصیلات کے مطابق وطن عزیز پاکستان میں امریکہ، بھارت اور سعودی عرب سے ڈالر اور ریال لیکرسوشل میڈیا پر فرقہ وارانہ منافرت پھیلانے والا کالعدم سپاہ صحابہ /لشکر جھنگوی کا اہم رکن آفتاب نظیر جسے گزشتہ روز ملتان میں عظمت صحابہ کے نام پر ہونے والے یزید ملعون کی حمایت اور شیعہ مخالف ریلی کے اختتام پرساتھیوں سمیت خفیہ اداروں کی جانب سے لاپتہ کردیا گیا تھا آج صبح ملتان ہائی کورٹ میں پیشی کے بعد ضمانت پر آزاد کردیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: لشکر جھنگوی ملک اسحاق گروپ کی ٹارگٹ ہٹ لسٹ جاری، نامور شیعہ سنی علماءوصحافیوں کے نام شامل

واضح رہے کہ یہ وہی آفتاب نظیر ہےجس کے جرائم اور گناہوں کی ایک طویل فہرست ہے، یہ پیشہ ور مجرم پاکستان میں بارودی مواد کی تنصیب ، بم دھماکوں، ٹارگٹ کلنگ اور دیگر وارداتوں میں پہلے بھی قانون نافذ کرنے والے اداروں کو مطلوب رہا ہے اور کئی ایک مرتبہ گرفتار بھی ہوچکاہے ۔

یہ بھی پڑھیں: ڈاکٹر مجاورعلی رضوی، ہمت ، جرت ، بہادری اور وطن سے محبت کی ایک لازوال داستان جوآج مکمل ہوئی

آج کل یہ آفتاب نظیر سوشل میڈیا پر قومی سلامتی، ریاستی اداروں، شیعہ مکتب فکر اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے خلاف نفرت انگیز ویڈیوز ڈال کر انتشاراور منافرت کو ہوا دیتا ہے، اس کی ویڈیوز سے پاکستان کی دوسری بڑی اکثریتی آبادی شیعہ کی مسلسل دل آزادی ہورہی ہے ،یہ بدبخت شخص شیعہ مقدسات اور علماء کے خلاف سر عام غلیظ زبان استعمال کرتا ہے،ایک جانب ہمارے ریاستی ادارے کہہ رہے ہیں کہ ہمارے دشمن بھارت ملک میں سوشل میڈیا کے ذریعے شیعہ سنی میں اختلاف ڈالنے میں مصروف ہے اور امریکہ 100ملین ڈالر پاکستان میں فرقہ وارانہ فسادات کے لئے تقسیم کرچکا ہے جبکہ یہی ریاستی ادارے ویڈیو ثبوتوں کے باجود پاکستان میں دھندناتے پھرتے اس بھینسے آفتاب نظیر کو لگام ڈالنے سے خوفزدہ نظر آرہے ہیں ۔

یہ بھی پڑھیں: ملتان، تکفیریوں کی ریلی کا ثمر، 80سالہ اہل سنت بزرگ شہری پر توہین صحابہ کا جھوٹا مقدمہ درج

اس خطرناک دہشت گرد کی اس طرح گرفتاری اور پھر عدالت سے ضمانت پر رہائی قانون نافذ کرنے والے اداروں اور ہمارے عدالتی نظام پر سوالیہ نشان کھڑے کررہی ہے ، پاکستان کے 22 کروڑٖ محب وطن عوام اپنی مقتدر قوتوں سے یہ پوچھنے پر مجبور ہیں کہ وہ کون سے قوتیں ہیں جنہوں نے اس ملک دشمن دہشت گرد آفتاب نظیر کو ایک رات بھی جیل کی سلاخیوں کے پیچھے نا رہنے دیا،کیا یہ شخص ہمارے ہی کسی اعلیٰ اختیاراتی ادارے یا افسر کا لےپالک تو نہیں ؟؟؟

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close