اہم ترین خبریںپاکستان

جس تبدیلی کیلئے عوام نے پی ٹی آئی کومینڈینٹ دیا اس کا دور دور تک نشان نظر نہیں آتا، علامہ احمد اقبال رضوی

حکومت کو آٹے کے بحران کے خاتمے کے لیے سنجیدہ اور ہنگامی بنیادوں پر کوششوں کا فوری آغاز کرنا چاہیے

شیعت نیوز: مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ احمد اقبال رضوی نے کہا ہے کہ خارجی محاذ پر ناکامی کے ساتھ ساتھ حکومت کی گرفت داخلی معاملات پر بھی کمزور پڑتی جا رہی ہے۔عوام کو آئے دن کسی نہ کسی نئی مشکل کا سامنا ہوتا ہے۔عوامی مسائل میں مسلسل اضافے کے باعث تحریک انصاف کی حکومت اپنی مقبولیت تیزی سے کھو رہی ہے۔عوام نے جس تبدیلی کے لیے موجودہ حکومت کومنتخب کیا تھا اس کا دور دور تک کوئی نام ونشان نظر نہیں آتا۔

یہ بھی پڑھیں: علامہ ساجد نقوی کی رہبر انقلاب کی پائیدار امن کیلئے امریکی تسلط سے آزادی کی فکر کی تائید

انہوں نے کہا کہ ملک کے مختلف حصوں میں آٹے کا بحران سنگین صورتحال اختیار کرتا جا رہا ہے۔مہنگائی نے عوام کا پہلے ہی بھرکس نکال دیا ہے۔حکومت کی ناقص انتظامی پالیسیوں کے باعث متوسط طبقہ بھی غربت کی سطح سے نیچے زندگی گزارنے پر مجبور ہو چکا ہے۔ حکومت کو آٹے کے بحران کے خاتمے کے لیے سنجیدہ اور ہنگامی بنیادوں پر کوششوں کا فوری آغاز کرنا چاہیے۔ اگر مصنوعی قلت پیدا کر کے مختلف قسم کے بحران پیدا کیا جارہے ہیں تو ذمہ داران کے خلاف سخت کاروائی حکومت کی ذمہ داری بنتی ہے۔ایسے لوگوں کے خلاف بلاتخصیص کاروائی ہونی چاہیے جو عوام کے لیے مسائل پیدا کر رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: قاسم سلیمانی کو مار کرٹرمپ نے غلطی کی ہے، امریکی رعب و دبدبہ ختم ہوگیا ،لیاقت بلوچ

انہوں نے کہا کہ جس تبدیلی کیلئے عوام نے پی ٹی آئی کومینڈینٹ دیا اس کا دور دور تک نشان نظر نہیں آتا، حکومت عوام سے کیے گئے ملازمتوں کے وعدے پورے کرے تاکہ ملک سے بے روزگاری کاخاتمہ ہو۔کسی بھی ملک کے نوجوان اور تعلیم یافتہ طبقہ اس ملک کی ترقی کی بنیاد ہوتا ہے۔انہیں نظر انداز کرنا ملکی تباہی کو دعوت دینے کے مترادف ہے۔ پڑھے لکھے نوجوانوں کو ملازمتیں فراہم کر کے ان کے اندر پائی جانے والی مایوسی کا خاتمہ کیا جائے۔ موجودہ حکومت مہنگائی سمیت دیگر مسائل پر قابو پانے میں ناکام رہی تو پاکستان کی سیاست میں اس کا مستقبل ہمیشہ کے لیے تاریک ہو جائے گا۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close