پاکستان

علامہ اقبال کے فکر ، فلسفے اور شاعری سے استفادہ کرنا وقت کی ضرورت ہے، علامہ ساجد نقوی

انہوں نے کہا کہ شاعر مشرق نے اپنے کلام کے ذریعے مسلمانوں کو ان کے کھوئے ہوئے مقام کے حصول اور بھولا ہوا سبق یاد کرانے کی سعی کی ۔

شیعت نیوز: عظیم فلاسفر ، مفکر اور شاعر ڈاکٹر علامہ محمد اقبال کی82ویں یوم وفات پر سربراہ شیعہ علماءکونسل پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی کہتے ہیں کہ ہمیں مصور پاکستان ڈاکٹر علامہ محمد اقبال کے فکر ، فلسفے اور شاعری سے استفادہ حاصل کرنا چاہیے اورملکی بحران میں ان کے حل کیلئے مدد لینی چاہیے اورشاعر مشرق کے اتحاد اُمت کے حوالے سے افکار انتہائی اہم ہیں اس پر عمل کرتے ہوئے امت کے اندر اتحاد و حدت کو فروغ دینا چاہیے ۔اور جس پاکستان کا خواب ڈاکٹر علامہ اقبال نے دیکھا ، افسوس وہ آج تک شرمندہ تعبیر نہ ہو سکا ۔

یہ بھی پڑھیں: زلفی بخاری سعودی عرب میں پھنسے پاکستانیوں کی آواز بن گئے، سعودی وزیر سے ویڈیو لنک رابطہ

علامہ سید ساجد علی نقوی نے مزید کہا کہ مصور پاکستان نے امت مسلمہ اور بالخصوص برصغیر کے مسلمانوں کی جس جانب رہنمائی کرائی اور امت کو بیدار کرنے کی کوشش کی اس پر عمل پیراہونے کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ شاعر مشرق نے اپنے کلام کے ذریعے مسلمانوں کو ان کے کھوئے ہوئے مقام کے حصول اور بھولا ہوا سبق یاد کرانے کی سعی کی ۔

یہ بھی پڑھیں: یوم علی ؑ کے تمام اجتماعات حکومتی قوائد وضوابط کے تحت منعقد کیئےجائیں،علامہ نیاز نقوی

ان کا مزید کہنا تھا کہ ڈاکٹر علامہ محمد اقبال نے جس پاکستا ن کا خواب دیکھا تھا افسوس وہ آج تک شرمندہ تعبیر نہیں ہو سکا ، ملک میں ہر طرف بحران ہی بحران نظر آتے ہیں ، سیاست میں شائستگی کا پہلوختم ہو رہاہے تو برداشت اور مساوات کا مادہ بھی نہ ہونے کے برابر ہے جو کسی صورت ملکی یکجہتی کےلئے بہتر نہیں۔

یہ بھی پڑھیں: اوریا مقبول جان کے آئیڈیل ترکی میں کورونا وائرس سے 82ہزار افراد متاثر جبکہ2ہزار17افراد ہلاک

آخر میں علامہ ساجد نقوی کا کہنا تھا کہ ہمیں شاعر مشرق علامہ اقبال کے اتحاد امت کے پیغام سے رہنمائی لیتے ہوئے باہمی بھائی چارہ کیلئے عملی اقدامات اُٹھانا ہو نگے تبھی شاعر مشرق کا خواب شرمندہ تعبیر ہوسکے گا۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close