اہم ترین خبریںپاکستان

تحریک آزادی القدس کے تحت کراچی میں بائیک اور کار ریلی، طیارہ حادثے پر اظہار افسوس

برادر علی اویس نے کہا کہ لاک ڈاون کے باوجود صہیونی دہشت گردوں نے فلسطین کے سرزمین کو مظلوموں کے خون سے رنگ رہے ہیں جبکہ او آئی سی خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے

شیعت نیوز: تحریک آزادی القدس پاکستان کے زیر اہتمام کراچی میں جمعۃ الوداع یوم القدس کے موقع پر آزادی بیت المقدس بائیک اور کار ریلی حکومتی احتیاطی تدابیر پر عمل کرتے ہوئے نکالی گئی، جس میں ہزاروں حامیان بیت المقدس اپنی موٹر سائیکلوں اور کاروں کے ساتھ شریک ہوئے, شرکائے ریلی نے سماجی دوری برقرار رکھتے ہوئے پاکستان اور فلسطین کا پرچم ہاتھوں میں تھام رکھا تھا, شرکاء ریلی کی جانب سے انبیاء کی مقدس سرزمین پر ناجائز صیہونی ریاست اسرائیل کے قبضے اور ظلم و بربریت کی شدید مذمت کی گئی۔

یہ بھی پڑھیں: یوم القدس پر اسلام آباد کی فضاءبھی مردہ باد امریکا اور نا منظور اسرائیل کی صداؤں سے گونج اٹھی

اس موقع پر ریلی کے شرکاء سے آئی ایس او پاکستان کے مرکزی جنرل سیکرٹری برادر علی اویس اور علامہ صادق تقوی نے خصوصی خطاب کیا، شرکائے ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مرکزی جنرل سیکرٹری کا کہنا تھا کہ عالمی استعماری طاقتیں مقدس سرزمین پر ناجائز ریاست کے استحکام کے لئے کوشاں ہیں تو دوسری جانب امت مسلمہ اور عرب حکمرانوں کی معنی خیز خاموشی فلسطینیوں کیلئے زہرِ قاتل ثابت ہورہی ہے، افسوس ہے امت مسلمہ اور عرب لیگ کی خاموشی پر جو اس قدر اسرائیلی مظالم کے باوجود خواب غفلت میں ہے۔

برادر علی اویس نے کہا کہ لاک ڈاون کے باوجود صہیونی دہشت گردوں نے فلسطین کے سرزمین کو مظلوموں کے خون سے رنگ رہے ہیں جبکہ او آئی سی خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے۔مرکزی جنرل سیکرٹری علی اویس نے کہا کہ وہ وقت دور نہیں جب رہبر معظم کی صیہونیت کے خاتمے، فلسطین کی آزادی اور بیت المقدس میں نماز ادا کرنے کی سنائی گئی نوید پوری ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں: فلسطین،کشمیر ، یمن اور دیگرممالک کے مظلوموں کی حمایت یوم القدس کا تقاضہ ہے،علامہ باقرعباس

مرکزی جنرل سیکریٹری نے وطن عزیز میں سازش کے تحت فرقہ وارانہ فسادات کرانے کے منصوبے سے حکومت کو متنبہ کرتے ہوئے ملوث عناصر کے خلاف فوری کارروائی کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے پاکستانی قوم کو اتحاد و وحدت قائم کرنے کا پیغام دیتے ہوئے کہا کہ امت مسلمہ کے تمام مسائل کا حل صرف اور صرف وحدت میں ہے، اتحاد ہوگا تو کشمیر تا فلسطین تمام مسائل حل ہوجائیں گے۔

برادر علی اویس کا مزید کہنا تھا کہ بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح نے اسرائیل کے وجود کو تسلیم کرنے سے انکار کرتے ہوئے ناجائز ریاست قرار دیا تھا اسی لیے پاکستانی پاسپورٹ پر اسرائیل کا سفر ممنوع ہے لہذا حکومت پاکستان مسئلہ فلسطین پر سنجیدگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے جمعۃ الوداع یوم القدس کو سرکاری سطح پر منانے کا اعلان کرے۔

یہ بھی پڑھیں: قومی ایئر لائن کا طیارہ کراچی ایئرپورٹ کے نزدیک آبادی پر گرکرتباہ ، بھاری جانی نقصان کاخدشہ

اس موقع پر علامہ صادق تقوی نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مائیک پومپیو کی جانب سے آیت اللہ خامنہ ای کے فلسطین کے حق میں دئیے گئے بیان کو یہود مخالف بیان قرار دینے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ انسانیت کا سب سے بڑا دشمن خود امریکا ہے اور انسانی حقوق کی پامالی کا الزام حق پرستوں پر لگانا کسی مذاق سے کم نہیں۔

انہوں نے امریکی صدر کی جانب سے یروشلم کو اسرائیلی دارلخلافہ تسلیم کرنیکی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ فلسطین کی سرزمین نہر سے بہر تک فلسطین کی ہے، مسئلہ فلسطین کا حل عوامی ریفرنڈم ہے لیکن عالمی طاقتوں کی جانب سے فلسطین کی تقسیم کسی صورت قبول نہیں۔

یہ بھی پڑھیں: آیت اللہ سید علی خامنہ ای کا خطاب، مسئلہ فلسطین میں نئی جان ڈال دے گا۔ تخت روانچی

انہوں نے مزید کہا کہ فلسطین کی آزادی اور یہودی سازشوں کا مقابلہ کرنے کے لئے مسلم ممالک کو ایک پیج پر آنا ہوگا, صدی کی ڈیل کے نام پر اسرائیل کو تسلیم کروانے کا منصوبہ کسی سے ڈھکا چھپا نہیں جبکہ اس معاملے میں نام نہاد مسلم ممالک کا اسرائیل کی طرف جھکاؤ مظلوم فلسطینیوں کی آزادی میں رکاوٹ ہے۔ریلی کے اختتام پر ملیر ماڈل کالونی میں گرنے والے پی آئی اے کے طیارے میں جاں بحق ہونے والے افراد کے لیے فاتحہ خوانی جبکہ زخمیوں کی جلد صحتیابی کے لیے دعا کی گئی۔ لواحقین سے اظہار افسوس کرتے ہوئے مقررین نے کہا کہ دکھ کی اس گھڑی میں ہم متاثرین کے ساتھ ہیں جبکہ عوام سے عید سادگی سے منانے کی بھی اپیل کی۔

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close