پاکستان کی اہم خبریں

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کشمیر پرثالثی نھیں بھارت کی سہولتکاری کر رہا ہے،سردار ظفر حسین

امریکہ مقبوضہ فلسطین پر اسرائیلی قبضے کا سب سے بڑا حامی اور مددگار ہے

شیعت نیوز :امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے مسئلہ کشمیر پر وزیراعظم عمران خان کو ایک بار پھر ثالثی کی پیشکش دھوکے کے سوا کچھ نھیں ۔ امریکہ مقبوضہ فلسطین پر اسرائیلی قبضے کا سب سے بڑا حامی اور مددگار ہے۔

یہ بھی پڑھیں :سپاہ قدس کے کمانڈر قاسم سلیمانی کی شہادت کا بدلہ ابھی باقی ہے، ناصر شیرازی

اطلاعات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ بھارت کو اپنا اسٹریٹیجک اتحادی سمجھتا ہے،اور ہمارے حکمران مظلوم کشمیر عوام کے قاتل بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے اتحادی ٹرمپ سے مسئلہ کشمیر پر ثالثی کا کردار ادا کرنے کی آس لگائے بیٹھے ہیں۔جماعت اسلامی فیصل آباد کے امیر سردار ظفر حسین کا کہنا ہے کہ امریکہ خود پوری دنیا میں ہونیوالے دہشت گردی کا ذمہ دار ہے،تو یہ کیسے ممکن ہے کہ وہ مظلوم کشمیری عوام کے خلاف بھارتی ریاستی دہشت گردی رکوانے کے حوالے سے کوئی مثبت کردار ادا کرے۔

یہ بھی پڑھیں :کشمیر و فلسطین پر جارحیت کیخلاف او آئی سی کو متحرک ہونا چاہئے، علامہ سید ساجد علی نقوی

سردار ظفر حسین نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان نے امریکی صدر سے اپیل کی ہے کہ وہ مسئلہ کشمیر کے حل میں مدد کریں، کئی ماہ پہلے کی گئی ثالثی کی پیشکش کا کیا ہوا؟ بھارت نے تو ثالثی یکسر مسترد کر دی اور ٹرمپ بھارت کو ناراض نہیں کرسکتا۔

یہ بھی پڑھیں :عالمی استعماری قوتوں کے خلاف امت مسلمہ کا اتحاد وقت کی اہم ضرورت ہے،پیر صفدر گیلانی

سردار ظفر حسین کا مزید کہنا تھا کہ عالمی دہشتگرد امریکہ ثالثی کے نام پر پاکستانی عوام کو مسئلہ کشمیر و فلسطین سمیت عالم اسلام اور مسلمانوں کے حقیقی مسائل سے الگ کرنیکی سازش میں مصروف ہے، جبکہ پاکستان سمیت پوری اسلامی دنیا کشمیر و فلسطین کی آزادی کے لئے پہلے سے زیادہ متحد اور متحرک ہو رہے ہیں۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close