اہم ترین خبریںپاکستان

شیعیان حیدر کرارؑ پر تکفیری اور ریاستی اداروں کے مظالم جاری، انصرعباس خان بھی جبری لاپتہ

تفصیلات کے مظفرگڑھ کی تحصیل علی پور کا رہائشی عنصر عباس خان بارہ محرم الحرام سے بہاولپور سے لاپتہ ہے، جن کا تاحال پتہ نہیں ہے

شیعیت نیوز: ایک جانب تکفیری عناصر کے حملے، ریاستی اداروں کےعزاداری اور عزاداروں پر مقدمات کا اندراج اور دوسری جانب خفیہ اداروں کی جانب سے شیعہ نوجوانوں کی جبری گمشدگیوں کا سلسلہ بھی تاحال جاری۔ امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان ملتان ڈویژن کے سابق رہنما انصرعباس خان 30اگست سے لاپتہ، اہل خانہ شدید تکلیف سے دوچار ریاستی اداروں کی بےحسی کی انتہا۔

یہ بھی پڑھیں: سعودی ریالوں کی کرامات،کراچی کی فضاء’’امیر یزید (لعنتی) زندہ باد‘‘ کے نعروں سے گونج اٹھی، ریاست خاموش

تفصیلات کے مظفرگڑھ کی تحصیل علی پور کا رہائشی انصرعباس خان بارہ محرم الحرام سے بہاولپور سے لاپتہ ہے، جن کا تاحال پتہ نہیں ہے جبکہ دوسری جانب اہلخانہ بھی سخت پریشان ہیں، عنصر عباس خان سے آخری مرتبہ 30 اگست کو رابطہ ہوا تھا، جس کے بعد اُن کے موبائل فون بھی بند ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: پاکستان میں موجودہ فرقہ وارانہ منافرت کے سرخیل مفتی منیب الرحمٰن کی بوکھلاہٹ کی اصل وجہ سامنے آگئے

واضح رہے کہ انصرعباس خان اکائونٹنگ کا طالبعلم تھا، بعدازاں وہ قم المقدسہ میں دینی تعلیم کے لیے عازم سفر ہوا، گذشتہ کئی سالوں سے قم المقدسہ میں زیر تعلیم تھا، عنصر عباس خان زمانہ طالبعلمی میں امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن ملتان ڈویژن کا سیکرٹری فنانس بھی رہا ہے۔

ایک جانب ملک دشمن سعودی نواز کالعدم جماعتیں شیعیان حیدر کرار ؑ کے خلاف صف آراءہوچکی ہیں تو دوسری جانب ہمارے ریاستی ادارے بھی ان سے پیچھے نظر نہیں آتے ۔اس وقت ملک ناذک ترین دور سے گزر رہا ہے لیکن ہمارے مقتدر ادارے ہوش کے ناخن لینے کو آمادہ نہیں۔

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close