دنیا

بھارت میں جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے طلباء کا کشمیریوں کے حق میں مظاہرہ

شیعت نیوز: نئی دہلی میں جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے طلباء نے ایک تقریب کے دوران جموں کشمیر سے دفعہ 370 ختم کرنے کے خلاف اور کشمیریوں کی حمایت میں مظاہرہ کا ہے۔

اطلاعات کے مطابق اس تقریب میں بھارتی وزیر جتندرا سنگھ بھی شریک تھے ذرائع کے مطابق اس موقع پر بائیں بازو کی تنظیموں سے تعلق رکھنے والے طلباء کے گروپوں اور ہندو انتہا پسند تنظیم آر ایس ایس سے وابستہ اکھیل بھارتیہ ودیارتھیہ پریشد کے درمیان شدید تلخ کلامی بھی ہوئی اور انہوں نے نعرے بھی لگائے۔

یہ بھی پڑھیں : وزیر خارجہ کو کشمیریوں سے خیانت پر تبدیل ہوجانا چاہیے، علامہ راجہ ناصر عباس

طلباء نے یونیورسٹی کنونشن سینٹر کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا اور ’’کشمیر ہے کشمیریوں کا ،ہندوستان کی جاگیرنہیں‘‘ جیسے نعرے بلند کئے۔ بی جے پی کے لیڈر اور وزیر جتندر ا سنگھ نے دفعہ 370کی منسوخی کے بارے میں تقریب کے وقت طلباء نے یہ نعرے بلند کئے۔

جواہر لال نہرو یونیورسٹی اسٹوڈنٹس یونین نے ایک بیان میں بھارت کے اس اقدام کی مذمت کرتے ہوئے یونیورسٹی کیمپس ، طلباء، اساتذہ اور عملے کے ارکان کی طرف سے کشمیری کے ساتھ مکمل حمایت کا اظہار کیا اور کشمیرمیں جمہوری اور آئینی اقدار پامال کرنے کی مذمت کی۔

بیان میں کہا گیا کہ اسٹوڈنٹس یونین کشمیری عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی جاری رکھے گی اور وادی کشمیر کی موجودہ صورتحال کے بارے میں ایک احتجاجی اجلاس بلائے گی جس میں وادی کی گھمبیر صورتحال کے بارے میں بتایا جائے گا۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close