دنیا

برکینا فاسو میں داعشی دہشتگردوں کا مسجد پر حملہ،16 نمازی شھید،سینکڑوں زخمی

مسجد پر حملے کے خلاف ہزاروں افراد کا دارالحکومت اواگادوگو کی جانب احتجاجی مارچ

شیعت نیوز : برکینا فاسو کے شمالی شہر سالموسی میں سعودی نمک خوار دہشتگردوں کے مقامی جامع مسجد پر حملے میں 16 نمازی شھید جبکہ سینکڑوں زخمی ہوگئے۔ مسجد پر حملے کے خلاف ہزاروں مقامی افراد کا دارالحکومت اواگادوگو کی جانب احتجاجی مارچ۔

اطلاعات کے مطابق مغربی افریقہ کے ملک برکینا فاسو کے شہر سالموسی میں سعودی نمک خوار داعش کے دہشتگردوں نے مقامی جامع مسجد پر اس وقت حملہ کیا کہ جب ڈھائی سو سے زائد نمازی اپنے رب کی بارگاہ میں سجد ریز تھے۔تکفیری دہشتگردوں کے حملے کے نتیجے میں 16 نمازی موقع پر ہی شھید ہو گئے جبکہ 80 سے زائد زخمی ہوئے۔ مقامی رہائشی کا کہنا ہے کہ داعشی دہشتگردوں کے حملے کے خلاف ہزاروں افراد نے دارالحکومت اواگادوگو کیجانب احتجاجی مارچ کا اغاز کرتے ہوئے افریقہ میں موجود امریکی فوجی تنصیبات اور سعودی عرب سے تعلقات کے فوری خاتمے کا مطالبہ کیا ۔

یہ بھی پڑھیں :یوم عاشور پر نائجیریا میں عزاداروں پر فورسزکا حملہ، 12 عزادار شہید

جامعہ مسجد پر حملے کے خلاف ہونے والے احتجاج کے ایک منتظم کا کہنا تھا کہ ہمارے ملک میں امریکی،اسرائیلی و سعودی مداخلت ، دہشتگردی کا سبب بن رہی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ امریکی فوجی تنصیبات اور سعودی سفارتخانہ ہماری سرزمین کے خلاف داعش اور دیگر دہشتگرد گروپوں کو مضبوط کررہے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق برکینا فاسو میں داعش ،القاعدہ سمیت دیگر سعودی نمک خوار دہشتگرد گروہوں نے شمال اور مشرقی علاقوں میں کارروائیوں کا آغاز کیا تھا، جس کے نتیجے میں کم ازکم 600 افراد شھید ہوچکے ہیں۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close