دنیا

چائنا کے بعد کورونا وائرس پاکستان اور بھارت میں بے قابو

شیعت نیوز: دنیا کے تقریبا تمام ممالک کو کورونا اپنی لپیٹ میں لے رہا ہے اور ہر چند کہ کورونا چائنا میں مہار ہو چکا ہے لیکن دنیا کے دیگر ممالک میں اس کا قہر بدستور جاری ہے۔

چائنا کے ہیلتھ کمیشن نے جمعرات کو ملک میں دوسرے ممالک سے آنے والوں میں کورونا وائرس کے 21 نئے کیسز کی تصدیق کی ہے۔ جبکہ دنیا کے دیگر ممالک من جملہ پاکستان اور بھارت میں کورونا وائرس تیزی سے پھیل رہا ہے۔

پاکستان میں کورونا وائرس سے دوسرے مریض کے جاں بحق ہونے کی تصدیق ہوگئی ہے جب کہ ملک میں کورونا کے 70 کیس رپورٹ ہوئے اس طرح کورونا کے مریضوں کی تعداد307 ہوگئی ہے جس میں سے 4 صحت یاب ہوکر گھروں کو واپس جا چکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : سعودیہ عرب سے واپس آنے 2مسافرپاکستان میں کورونا وائرس کے پہلے جاں بحق قرار

وزیرصحت خیبرپختونخوا تیمور جھگڑا نے کورونا وائرس سے 2 ہلاکتوں کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہےکہ مردان میں 50 سالہ شخص جب کہ پشاور کے لیڈی ریڈنگ اسپتال میں 36 سالہ مریض نے دم توڑ دیا، 50 سالہ شخص ایک ہفتے پہلے سعودی عرب سے آیا تھا اوروینٹی لیٹر پرزیرعلاج تھا جب کہ 36 سالہ مریض ہنگو کا رہائشی تھا۔

پاکستان کے زیرانتظام کشمیرمیں ایک کورونا مریض کی تصدیق ہوئی ہے۔

بھارت میں کورونا سے 3 افراد کی ہلاکت کے بعد کل دہلی کے صفدرجنگ اسپتال میں ساتویں منزل سے چھلانگ لگاکر کورونا وائرس سے متاثرہ مشتبہ ایک مریض نے خودکشی کرلی ۔

جنوب مغربی ضلع ، ڈپٹی کمشنر پولیس کے دیویندر آریہ نے بتایا کہ یہ شخص شام 5.30 بجے ہوائی جہاز AI-301 کے ذریعے سڈنی سے اندرا گاندھی ایئرپورٹ پہنچا تھا۔ سر درد کی شکایت کی وجہ سے کل رات 9 بجے اسپتال میں داخل کیا گیا تھا۔

دوسری جانب بھارت کے وزیراعظم نریندرمودی آج رات 8 بجے کورونا وائرس (کووڈ ۔19) سے متعلق امور پر قوم سے خطاب کریں گے۔

ادھر بنگلہ دیش میں بدھ کے روز کورونا وائرس کے باعث 70 سالہ خاتون کی موت کے ساتھ ہی ملک میں موت کا پہلا معاملہ سامنے آیا ہے۔ اس کی تصدیق بنگلہ دیش انسٹی ٹیوٹ آف ایپیڈیمولوجی ، بیماریوں کے کنٹرول اور تحقیق (بی آئی ای ڈی سی آر) نے کی ہے۔

بی آئی ای ڈی سی آر کی ڈائریکٹر میرزادے سبرینہ فلورا نے بتایا کہ 70 سالہ خاتون کی موت کورونا سے متاثرہ شخص کے ساتھ رابطے میں آنے کے بعد ہوئی۔

واضح رہے کہ عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے کورونا وائرس کے بڑھتے خطرات کے پیش نظر اسے 11 مارچ کو عالمی وبا قرار دے دیا تھا۔

خیال رہے کہ چائنا کے صوبے ہبوئی کے دارالحکومت ووہان سے شروع ہونے والا جان لیوا وائرس کی زد میں دنیا کے 160 سے زائد ممالک آ چکے ہیں اور اس سے متاثر تقریباً 8500 افراد کی موت ہوچکی ہے جبکہ اب تک 200،000 سے زیادہ لوگ اس وائرس کی زد میں ہیں۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close