اہم ترین خبریںپاکستان کی اہم خبریں

وفاق کے فیصلوں پر 100 فیصد عمل کرینگے،لاک ڈاؤن برقراررہے گا، وزیراعلیٰ سندھ کا اعلان

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ 9 مئی سے قبل بند انڈسٹریز سوائے کنسٹرکشن کے بدستور بند رہیں گی، اس کے علاوہ دفاتر جو 9 مئی سے پہلے بند تھے، وہ بھی بند رہیں گے

شیعت نیوز: وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کا کہنا ہے کہ لاک ڈاؤن کھولنے سے متعلق وفاق کے فیصلوں پر 100 فیصد عمل کریں گے، تاہم جو اعلان وفاقی حکومت نے کیے ہیں، ان کی ڈائریکشن میں لاک ڈاؤن ابھی رہے گا۔ کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ لوگ کہتے ہیں کہ لاک ڈاؤن کا فیصلہ عجلت میں کیا، ایسا بلکل نہیں، اگر لاک ڈاؤن نہیں کرتے تو حالات مزید خراب ہوتے، لاک ڈاؤن کھولنے سے کیسز میں تیزی آئے گی، لہٰذا وزیراعظم کو کل کہا کہ حقائق کو مدنظر رکھ کر فیصلہ کرنا چاہیے۔ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کہا کہ سپریم کورٹ نے کہا ہے کہ وفاق صوبوں سے مشاورت کے ساتھ فیصلے کرے، اس وقت ملک مشکل حالات سے گزر رہا ہے، لہٰذا جذبات کے بجائے ڈیٹا اور زمینی حقائق کے مطابق فیصلے کیے جائیں۔

یہ بھی پڑھیں: امام حسن علیہ السلام نے ثابت کیا کہ دین اسلام کی سربلندی انہیں ہر شے پرمقدم ہے،علامہ راجہ ناصرعباس

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کہا کہ وزیراعظم سے پہلے اجلاس میں لاک ڈاؤن کا کہا تھا، 14 اپریل کو دو ہفتوں کیلئے وفاقی حکومت نے لاک ڈاؤن بڑھانے کا اعلان کیا، تاہم 14 اپریل کو لاک ڈاؤن میں کچھ نرمی کی، جس کے باعث کورونا کیسز میں اضافہ ہوا۔ وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ کل دوپہر کو وزیراعظم نے اجلاس بلایا، جس میں وفاقی حکومت نے اپنا پلان پیش کیا، وفاقی حکومت نے جو فیصلے کیے، سندھ حکومت نے ان پر عمل کیا ہے اور آئندہ بھی 100 فیصد عمل کریں گے، کل بھی جو اعلان وفاقی حکومت نے کیے ہیں، ان کی ڈائریکشن میں بتا رہا ہوں کہ لاک ڈاؤن ابھی رہے گا۔

یہ بھی پڑھیں: عزاداری فرض نہیں جیسے الفاظ ملت کی توہین ہے،یوم علی ؑ پر جلوس ہرصورت نکلے گا ،شیعہ تنظیمات

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ 9 مئی سے قبل بند انڈسٹریز سوائے کنسٹرکشن کے بدستور بند رہیں گی، اس کے علاوہ دفاتر جو 9 مئی سے پہلے بند تھے، وہ بھی بند رہیں گے، جبکہ ضروری دکانیں فجر سے شام 5 بجے تک کھلیں گی، رہائشی علاقوں میں قائم دکانیں کھولی جائیں گی، تاہم مالز اور بڑی مارکیٹیں بند رہیں گی، جبکہ ہفتے اور اتوار کو 100 فیصد لاک ڈاؤن ہوا کرے گا۔ وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ اپنے بزرگوں کی صحت کے لیے احتیاطی تدابیر اختیار کریں، باہر نکلنے والے افراد ماسک ضرور پہنیں، صرف وہ افرد گھر سے باہر نکلیں، جنہیں اجازت ہے، بیمار اور بزرگ افراد گھروں سے نہ نکلیں، ذیابیطس اور امراضِ قلب کے مریض گھروں سے نہ نکلیں، ضروری کاموں سے باہر نکلنے والے نوجوان بھی گھروں میں موجود اپنے بزرگوں کے پاس نہ جائیں۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close