اہم ترین خبریںپاکستان

سعودی نواز کالعدم تنظیموں کی فرقہ واریت کو ہوا دینے کی مذموم کوشش، حکومت فورا ایکشن لے

مگر یہ بھی یاد رکھا جائے کہ ہم حسین ع کے ماننے والے ہیں۔دوسروں کی تکفیر نہیں کرتے مگر اپنی عزت پر سودا بھی نہیں کریں گے۔ ریاست ہمارے حقوق کا تحفظ نہیں کرے گی تو ہم خود اپنا حق لیں گے۔

شیعیت نیوز: عاشور کے دن سعودی نواز کالعدم تنظیموں کی جانب سے سوشل میڈیا (ٹویٹر اور فیسبک)پر شیعہ کافر کا ٹرینڈ چلایا گیا۔ اس سے قبل پانچ محرم کو بھی اہل تشیع کی تکفیر کا ٹرینڈ چلایا گیا تھا۔ تکفیریوں نے یہ ٹرینڈ چلا کر ریڈ لائن کو عبور کیا ہے۔ یہ وہ دور نہیں ہے کہ جب اہل تشیع ہر طرح کی بکواس کو خاموشی سے سنتے رہیں گے۔

مگر اسکے باوجود ملت تشیع نے اتحاد امت اور وحدت کی خاطر صبر سے کام لیا اور حکومت سے امید رکھی کے وہ فتنہ پروروں کے خلاف کارروائی کرے گی۔ مگر اس کے باوجود ایف آئی اے سمیت تمام حکومتی ادارے خاموش تماشائی بنے رہے۔ یوم عاشور کو جب کروڑوں شیعہ رسول اللہ (ص) کے نواسے کی شہادت پر پرسہ دے رہے تھے ایسے میں اس طرح کا ٹرینڈ چلانا ناقابل برداشت ہے۔ حکومت کس چیز کا انتظار کر رہی ہے؟؟ فتنہ پروروں کے خلاف کارروائی کیوں نہیں کر رہی؟

یہ بھی پڑھیں: سندھ حکومت شیعہ دشمنی پر اتر آئی، تکفیریوں کی ایماء پر 70 سالہ بزرگ عزادار کے گھر پر چھاپا،تین عزیزگرفتار

کیا حکومت انتظار کر رہی ہے کہ دیگر مسالک کے خلاف بھی تکفیر کے ٹرینڈ چلنے شروع ہوجائیں؟ اہل بیت ع کے در سے بصیرت لینے والے اتنا شعور رکھتے ہیں کہ دشمن کی سازش کا شکار ہو کر سنی بھائیوں کے خلاف کفر کا ٹرینڈ نہیں چلائیں گے۔ کیونکہ تکفیری ٹرینڈ اہل سنت عوام نہیں بلکہ فتنہ پرور تنظیمیں چلارہی ہیں۔

مگر یہ بھی یاد رکھا جائے کہ ہم حسین ع کے ماننے والے ہیں۔دوسروں کی تکفیر نہیں کرتے مگر اپنی عزت پر سودا بھی نہیں کریں گے۔ ریاست ہمارے حقوق کا تحفظ نہیں کرے گی تو ہم خود اپنا حق لیں گے۔

ہم حکومت کو ایک اور موقع دینا چاہتے ہیں۔تمام مومنین کو چاہیے کہ فورا حکومتی ادارے ایف آئی اے کے سائبر ونگ کو شیعہ کافر ٹرینڈ کے خلاف رپورٹ درج کروائیں۔ حکومت فوری ان شرپسندوں کو گرفتار کرے، انکے خلاف کارروائی کرے اور انکے تمام سوشل میڈیا اکاونٹس اور ویبسائٹس فوری بین کرے۔

یہ بھی پڑھیں: وطن عزیز میں سعودی عرب کی ایما پر فرقہ وارانہ خانہ جنگی کروانے کی سازش کا انکشاف

ایف آئی کو شکایت درج کروانے کے لئے آپ اس ایڈرس پر ای میل بھیجیں اور ٹرینڈز کا لنک یا تصاویر ساتھ لگائیں

ای میل یہ ہے:[email protected]
یا پھر آپ ایف آئی اے کی ویبسائٹ پر آنلائن فارم پر کر سکتے ہیں 👇

http://complaint.fia.gov.pk/

اور ساتھ ہی آپ اینڈرائڈ پر پرائمنسٹر پورٹل کی ایپ ڈاونلوڈ کرکے وہاں بھی ایف آئی کو کملینٹ درج کروا سکتے ہیں

کمپلینٹ درج کروانے سے متعلق کسی مشکل کی صورت میں ایف آئی اے کی ہیلپ لائن پر کال کریں
111-345-786

یا پھر 9911 پر رابطہ کر سکتے ہیں۔

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close