مقبوضہ فلسطین

غاصب صیہونی حکومت کو فلسطینی نوجوانوں کا انوکھا جواب

شیعت نیوز : فلسطینی نوجوانوں نے غاصب صیہونی حکومت کے جارحانہ اور غاصبانہ اقدامات کا جواب دیتے ہوئے مقبوضہ علاقوں کی طرف آتشی غبارے اور پتنگیں چھوڑنے کا سلسلہ شروع کر دیا ہے۔

فارس نیوز کے مطابق جمعہ کے روز فلسطینی نوجوانوں نے اعلان کیا کہ غاصب صیہونی حکومت کے دہشت گردانہ اور جارحانہ اقدامات کو لگام دینے کے لئے آتشی غباروں اور پتنگوں سے مقبوضہ علاقوں کو نشانہ بنانے کا سلسلہ آئندہ بھی جاری رکھا جائے گا۔

زمینی و فضائی محاصرے سے روبرو غزہ پٹی کے فلسطینی باشندے صیہونی دہشت گردوں کے حملوں اور انکی جارحیت کا مقابلہ کرنے کے لئے آتشی غباروں اور پتنگوں کا استعمال کرتے رہتے ہیں جس کے باعث صیہونیوں کو اب تک کئی میلین ڈالر کا نقصان اٹھانا پڑا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : غرب اردن کے الحاق کے خلاف مشترکہ مزاحمتی پروگرام تشکیل دیا جائے۔ ڈاکٹر ابو مرزوق

غاصب صیہونی حکومت کے سرغنہ بنیامن نیتن یاہو نے صیہونی آبادیوں کی جانب چھوڑے جانے والے آتشی غباروں اور پتنگوں کو ایک ڈراونے خواب سے تعبیر کیا ہے۔

دوسری جانب فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے کے شمالی شہر نابلس میں یہودی شرپسندوں نے فلسطینی شہریوں کی کھیتوں میں کھڑی فصلوں اور زرعی اجناس کو آتش گیر مواد چھڑک کرآگ لگا دی۔ دوسری طرف اسرائیلی فوج نے غرب اردن کے متعدد شہروں میں گھر گھر تلاشی کے دوران متعدد شہریوں کو حراست میں لے لیا۔

رپورٹ کے مطابق گذشتہ روز صیہونی آباد کاروں نے شمالی شہر نابلس میں الساویہ اور یتما کے مقامات پر فلسطینیوں کی فصلوں کو آگ لگا دی۔عینی شاہدین نے بتایا کہ صیہونی آباد کاروں نے یتما کے مقام پر فلسطینیوں کے زیتون اور انگور کے باغات کو بھی آگ لگا دی جس کے نتیجے میں کئی پھل دار پودے جل کر رکھ ہوگئے۔

یتما میں صیہونی آباد کاروں نے گندم کی تیار فصل کو آگ لگا دی جس کے نتیجے میں کئی کنال پرپھیلی جل کرراکھ ہوگئیں۔

شمالی غرب اردن میں مقامی فلسطینی سمامی کارکن غسان دغلس نے بتایا کہ 20 یہودی اشرار نے اسرائیلی فوج کی نگرانی میں باب الواد کے قام پر دھاوا بولا اور فلسطینیوں کی فصلوں کوآگ لگا دی۔

صیہونی آباد کاروں نے متعدد فلسطینی کاشت کاروں پر بھی پرتشدد کیا جس کے نتیجے میں ایک فلسطینی شدید زخمی ہوگیا۔ زخمی شہری کو اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔ادھر مشرقی شہر طوباس میں اسرائیلی فوج نے ایک چیک پوسٹ سے دو فلسطینیوں کو حراست میں لے لیا۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close