اہم ترین خبریںمقبوضہ فلسطین

غزہ میں پریڈ کے دوران دھماکہ، القدس بریگیڈ کے چار کمانڈر شہید

شیعیت نیوز : فلسطین کے علاقے غزہ کی پٹی میں اسلامی جہاد کے عسکری ونگ القدس بریگیڈ کے زیراہتمام منعقدہ ایک پریڈ میں زور دار دھماکہ ہوا جس کےنتیجے میں کم سے کم 4 کمانڈر شہید ہوگئے۔ شہدا کا تعلق مشرقی الشجاعیہ کے غزہ بریگیڈ سے ہے۔

القدس بریگیڈ کی طرف سے جاری ایک بیان  میں کہا گیا ہے کہ پریڈ کے دوران اس کے چار کمانڈر شہید ہوگئے۔ ان کی شناخت 42 سالہ ایاد جمال الجدی، 29 سالہ معتز عامر المبیض، 25 سالہ یعقوب منذر زیدیہ اور 23 سالہ یحییٰ فرید المبیض کےناموں سے کی گئی ہے۔ یہ تمام کمانڈر الشجاعیہ کالونی کے رہائشی ہیں۔ تنظیم کی طرف سے پریڈ میں ہونے والے دھماکے کی مزید تفصیل بیان نہیں کی گئی۔

یہ بھی پڑھیں : یمن: القاعدہ کے ہاتھوں سولی پر چڑھائے جانے والے ڈاکٹر کا کلینک بھی تباہ

دوسری جانب اسرائیلی فوج نےدعویٰ کیا ہےکہ 10 روز پیشتر صہیونی ریاست کے دارالحکومت تل ابیب میں فلسطینی مزاحمت کاروں نے چاقو سے یہودی آباد کاروں پرحملہ کرکے ایک آباد کار کو شدید زخمی کردیا تھا۔ صہیونی فوج کا کہنا ہے کہ تلاشی کے دوران سیکیورٹی فورسز نے حملہ آور اس کے تین ساتھیوں کو گرفتار کرلیا ہے۔

اسرائیلی فوج کے مانیٹرنگ ڈیپارٹمنٹ نے 10 روز قبل دارالحکومت میں ہونے والے مزاحمتی حملے کی تفصیلات جاری کرنے کی اجازت دی ہے جس کے بعد بتایا گیا ہے کہ غرب اردن کے شمالی شہر جنین سے تعلق رکھنے والے ایک فلسطینی نوجوان نے تل ابیب میں راس العین کے مقام پر 15 اگست کو ایک یہودی آباد کار کو چاقو سے وار کرکے شدید زخمی کردیا تھا۔

عبرانی ذرائع کے مطابق خفیہ ادارے ’’شاباک‘‘ نے فوج کےتعاون سے حملہ آور کو راس العین کے مقام سے اسی روز حراست میں لے لیا تھا۔اس کے علاوہ قابض فوج نے حملہ آور فلسطینی مزاحمت کار کے تین ساتھیوں کو بھی گرفتار کیا ہے۔ ان پر اس کارروائی کی منصوبہ بندی میں معاونت کرنے، کارروائی کو چھپانے اور حملہ آور کو مدد فراہم کرنے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close