اہم ترین خبریںعراق

حشد الشعبی کی تکفیریوں کے خلاف کارروائی، داعش کے 8 دہشت گرد گرفتار

شیعت نیوز : عراقی رضاکار فورس حشد الشعبی کی کارروائی میں داعش کے 8 دہشت گرد گرفتار ہوئے۔

موصولہ رپورٹ کے مطابق عراقی رضاکار فورس حشد الشعبی نے ملک کے شمالی صوبے صلاح الدین میں داعش کے خلاف آپریشن کے دوران داعش کے 8 دہشت گردوں کو گرفتار کر لیا۔

عراقی رضاکارفورس حشد الشعبی سینئر رکن صادق الحسینی نے المعلومہ ویب سائٹ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ صلاح الدین صوبے کے پولیس اہلکاروں کے تعاون سے صلاح الدین صوبے کے المطیبیجہ علاقے سے داعش کے 8 دہشت گردوں کو گرفتار کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں : حزب اللہ عراق کے خلاف کاروائی ناقابل قبول ہے، نوری المالکی

ان کا کہنا تھا کہ گرفتار دہشت گرد سیکورٹی ادارے اور عدالت کو مطلوب تھے اور خطرناک دہشت گردوں میں ان کا شمار ہوتا تھا۔

واضح رہے کہ المطیبیجہ علاقہ صوبہ دیالہ اور صلاح الدین صوبوں کے درمیان واقع ہے اور داعش کے دہشت گردوں کی سرگمی کی وجہ سے خطرناک علاقوں میں شمار ہوتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : مقبوضہ کشمیر میں بھارتی ریاستی دہشتگردی، بھارتی فوج نے مزید 3 کشمیری جوان شہید کردیئے

دوسری جانب عراق کے وزیر اعظم نے کہا ہے کہ عراق سے امریکی فوجیوں کے انخلا کے بارے میں واشنگٹن کے ساتھ ہونے والے مذاکرات کامیاب رہے ہیں۔

عراق کے وزیراعظم مصطفی الکاظمی نے نامہ نگاروں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کا ملک ہر طرح کی غیر ملکی سازشوں کا ڈٹ کر مقابلہ کرے گا اور وہ اپنی سلامتی کو خطرہ لاحق نہیں ہونے دے گا۔

بغداد اور واشنگٹن کے درمیان اسٹریٹیجک مذاکرات گیارہ جون کو ویڈیو کانفرنس کے ذریعے شروع ہوئے ہیں اور فریقین کے درمیان اب مختلف مسائل منجملہ عراق سے امریکی فوجیوں کے انخلا کے بارے میں گفتگو ہوئی ہے۔

عراق کے وزیراعظم مصطفی الکاظمی نے اسی طرح عراق کی سرحدی گذرگاہوں کو تحفظ فراہم کرنے کے سلسلے میں جلد ہی کارروائی شروع کئے جانے کی بھی خبردی ہے۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close