پاکستان

شیعہ مخالف اشتعال انگیز تقریر کرنے پر کالعدم اہل سنت والجماعت راولپنڈ ی کے صدر کو 6 ماہ قید

اہل سنت و الجماعت (اے ایس ڈبلیو جے) راولپنڈی چیپٹر کے سابق صدر دہشتگرد مفتی تنویر عالم فاروقی کو مذہبی منافرت پھیلانے (شیعہ مخالف تقریر کرنے) پر 6 ماہ قید اور 50 ہزار روپے جرمانے کی سزاسنادی گئی ہے.

واضح رہے کہ رواں برس پولیس کے محکمہ انسدادِ دہشت گردی (سی ٹی ڈی) نے نفرت انگیز تقاریر کرنے پر مفتی تنویر عالم کے خلاف انسدادِ دہشت گردی ایکٹ (اے ٹی اے) 9 کے تحت مقدمہ درج کرکے انھیں گرفتار کیا تھا، تاہم عدالت نے مفتی تنویر کی ضمانت منظور کرلی تھی.

انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت میں مذکورہ کیس کی سماعت کے دوران جج آصف مجید اعوان نے مفتی تنویر عالم پر الزامات ثابت ہونے پر انھیں 6 ماہ قید اور 50 ہزار روپے جرمانے کی سزا سنادی.

جس کے بعد اے ایس ڈبلیو جے کے ضمانت پر رِہا رہنما مفتی تنویر عالم کو پولیس نے گرفتار کرلیا.

واضح رہے کہ کالعدم تنظیم سپاہ صحابہ پاکستان (ایس ایس پی) سے تشکیل پانے والی تنظیم اہل سنت والجماعت پر فروری 2012 میں پابندی لگا دی گئی تھی۔

تاہم پابندی کے باوجود ملک میں اے ایس ڈبلیو جے کی سرگرمیاں جاری ہیں اور یہ تنظیم وقتاً فوقتاً مختلف شہروں میں مذہبی منافرت پرمبنی کانفرنسز اور اجتماعات منعقد کرتی رہتی ہے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close