پاکستان

امام علیؑ و حضرت فاطمہؑ نے زندگی گزارنے کے رہنما اصول فراہم کیے، علامہ ساجد نقوی

شیعیت نیوز : شیعہ علماء کونسل پاکستان کے سربراہ علامہ سید ساجد علی نقوی نے امیر المومنین حضرت علیؑ اور دختر پیغمبر اکرم حضرت فاطمۃ الزہرا ؑ کے روز عقد کی مناسبت سے امت مسلمہ کو تبریک اور تہنیت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ امیر المومینؑ و سیدہ فاطمہؑ نے زندگی گزارنے کے رہنما اصول فراہم کیے۔

یہ خبر بھی پڑھیں پارا چنار دھماکہ، علاقائی امن کو تباہ کرنے کی سازش کی جا رہی ہے، علامہ راجہ ناصر عباس

علامہ ساجد نقوی نے کہا کہ کائنات کا وہ مثالی جوڑا ہے، جس نے عظمت و طہارت، پاکیزگی و پاکدامنی اور الفت و محبت کے ذریعہ نہ صرف رہتی دنیا تک کیلئے ازدواج مہر، جہیز اور گھریلو زندگی کو اطمینان و سکون اور خوشحالی سے گزارنے کے رہنما اصول دیئے بلکہ تربیت اولاد جیسے اہم اور عظیم فریضے کی نہایت خوبصورت انداز میں ادائیگی کر کے دنیائے عالم کو جناب حسنؑ و حسینؑ اور جناب زینبؑ و کلثومؑ جیسی اولادیں عنایت کیں، جن کا علم و عمل اور سیرت و کردار رہتی دنیا کے انسانوں کے لیے مشعل راہ ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ زوجین کا ہاشمی اور پیغمبر گرامی قدر سے نسبت فقط اور فقط جناب علی ابن ابی طالبؑ اور سیدہ طاہرہؑ کا خاصہ ہے۔ پیغمبر گرامی کا خواستگاری کے وقت مال و زر اور جاہ و جلال کے بجائے حضرت علیؑ کو دامادی میں قبول کرنے سے یہ سبق ملتا ہے کہ بیٹیوں کے رشتے کرتے وقت معیار مال نہیں بلکہ کمال کو بنانا چاہیئے۔

علامہ ساجد نقوی نے یہ بات زور دے کر کہی کہ نکاح کے بعد پیغمبر گرامی کا حضرت علیؑ اور جناب سیدہؑ سے سوال کرنا ہے کہ آپ نے ایک دوسرے کو کیسا پایا تو جواب میں جناب سیدہؑ نے فرمایا کہ بہترین شوہر علیؑ ہیں اور حضرت علیؑ کا کہنا کہ خدا تعالیٰ کی اطاعت پر بہترین مدد گار پایا۔ یہ ایک ایسا ضابطہ حیات ہے جو دور حاضر میں بھی اپنا کر تمام مسائل و مشکلات پر بآسانی قابو پایا جاسکتا ہے۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close