مقبوضہ فلسطین

ایران کی حمایت نے مزاحمتی محاذ کو پر امید بنا دیا ہے۔ جہاد اسلامی

شیعت نیوز: فلسطین کی مزاحمتی تنظیم جہاد اسلامی کے سربراہ زیاد النخالہ نے لبنان کے المیادین چینل سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایران نے فلسطین کی حمایت کے تعلق سے کبھی بھی کوئی کوتاہی نہیں کی اور اس وقت خطے میں سرگرم مزاحمتی محاذ ماضی سے زیادہ طاقتور ہو چکا ہے۔

فلسطین کی جہاد اسلامی کے سربراہ نے ایران کی سپاہ قدس کے سابق کمانڈر شہید جنرل قاسم سلیمانی کی جانب سے خطے میں سرگرم مزاحمتی محاذ کی ہونے والی حمایت کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ مزاحمتی محاذ پر شہید قاسم سلیمانی ایران کی نمائندگی کرتے تھے اور ان کی شہادت کے بعد بھی استقامتی جذبہ اور اسکی حمایت کا سلسلہ بدستور جاری ہے۔

زیاد النخالہ نے مزاحمتی محاذ کے لئے سپاہ قدس کے موجودہ کمانڈر جنرل اسماعیل قاآنی کے کردار کو بھی اہم قرار دیا اور تاکید کی کہ استقامت اب تک جاری رہی ہے اور آئندہ بھی جاری رہے گی۔

یہ بھی پڑھیں : رمضان المبارک کا آخری جمعہ فلسطینی اور کشمیری مسلمانوں کی حمایت میں عالمی یوم القدس کے طور پر منایا جائے گا، علامہ راجہ ناصرعباس

جہاد اسلامی فلسطین کے سربراہ نے اسی طرح عالمی یوم قدس کی اہمیت کی جانب بھی اشارہ کیا اور کہا کہ بانی انقلاب اسلامی امام خمینی ؒنے ماہ رمضان کے آخری جمعہ کو یوم القدس کا نام دے کر در حقیقت یہ اعلان کیا کہ فلسطین کا مسئلہ ایک اسلامی اور عالمی مسئلہ ہے۔

دوسری جانب فلسطینی مزاحمتی تحریک جہاد اسلامی فی فلسطین کے مرکزی رہنما احمد المدلل نے امام خمینیؒ کی طرف سے جمعۃ الوداع کے روز عالمی یوم فلسطین کے اعلان کی طرف اشارہ کرتے ہوئے فلسطین کی آزادی کو امتِ مسلمہ اور عرب دنیا کا اصلی ترین مسئلہ قرار دیا ہے۔

عرب ای مجلے العہد کے مطابق احمد المدلل نے مسئلہ فلسطین کے حل کے لئے امام خمینیؒ کی کاوشوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران آیت اللہ خامنہ ای کی رہنمائی میں امام خمینیؒ کے دیئے ہوئے رستے پر کاربند اور بدستور فلسطینی قوم اور اس کے مزاحمتی محاذ کی حمایت میں مشغول ہے۔

انہوں نے کہا کہ آج فلسطینی مزاحمتی محاذ نے ایران کی عسکری حمایت کے بدولت غاصب صیہونی دشمن کے وجود کو خطرے میں ڈال رکھا ہے۔

فلسطینی مزاحمتی تحریک جہاد اسلامی کے مرکزی رہنما نے ایرانی سپاہ قدس کے کمانڈر شہید قاسم سلیمانی کی طرف سے فلسطینی مزاحمتی محاذ کی بےبہا حمایت کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ شہید جنرل قاسم سلیمانی نے اپنی پوری زندگی مسئلۂ فلسطین اور فلسطینی مزاحمتی محاذ کی حمایت میں صرف کر دی۔

انہوں نے کہا کہ ایران ہمیشہ سے مسئلۂ فلسطین کی حمایت میں کوشاں رہا ہے جبکہ جمعۃ الوداع کے روز آیت اللہ خامنہ ای اپنے خطاب میں فلسطین کی آزادی پر مبنی فلسطینی قوم کی جاری جدوجہد کی حمایت، غاصب صیہونی حکومت اسرائیل کے ساتھ دوستانہ تعلقات قائم کرنیوالوں کو مجرم قرار دینے اور امریکہ کے فلسطینی دشمن ہونے پر ایک مرتبہ پھر تاکید کریں گے۔

انہوں نے اپنے بیان کے آخر میں مطالبہ کیا کہ پوری امت مسلمہ فلسطین کی آزادی کے مسئلے کو اپنی پہلی ترجیح قرار دے اور بعض اسلامی و عرب ممالک غاصب صیہونی حکومت اسرائیل کے ساتھ تعلقات استوار کرنے کی کوششیں ترک کر دیں۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close