عراق

عراق: امریکی سفارتی عملے کو فوری طور پر بغداد چھوڑنے کا حکم

شیعت نیوز : امریکی حکام نے عراق کے دارالحکومت بغداد میں موجود امریکی سفارتی عملے کو فوری طور پر عراقی سرزمین چھوڑنے کا حکم دیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق امریکی حکام نے عراق میں واقع اپنے سفارت خانے کےعملے کو ملک چھوڑنے کا حکم دیا ہے۔

امریکی حکومت نے بغداد اور اردبیل (شمالی عراق) میں اپنے ملازمین کو عراقی سرزمین چھوڑنے کا حکم دیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : عراق: دارالحکومت بغداد میں امریکی سفارت خانے پر راکٹ حملے

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ یہ فیصلہ شہریوں کو کورونا وائرس سے بچانے کے لئے کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ امریکی حکام نے سفارتی عملے کو عراق چھوڑنے کا حکم ایک ایسے وقت میں دیا ہے کہ خود امریکہ میں کورونا وائرس بے قابو ہوچکا ہے اور اس وقت ہزاروں امریکی شہری کورونا وائرس کے شکار ہوچکے ہیں۔

دوسری طرف فرانس کی وزارت دفاع نے عراق سے اپنے فوجیوں کو باہر نکالنے کی خبر دی ہے۔

رشا ٹوڈے کی رپورٹ کے مطابق فرانس کی فوج نے ایک بیان میں کہا ہے کہ حکومت نے کورونا وائرس پھیلنے کی تشویش کے باعث عراق میں تعینات اپنے تمام فوجیوں کو واپس بلانے کا فیصلہ کیا ہے۔

فرانسیسی وزارت دفاع کے بیان میں آیا ہے کہ فرانس، عراق میں تعینات اپنے فوجیوں کو واپس بلانا چاہتا ہے۔ بیان کے مطابق اس وقت فرانس کے تقریبا سو فوجی عراق میں تعینات ہیں۔

یہ ایسے عالم میں ہے کہ عراق کے عبوری وزیر اعظم کے ترجمان عبد الکریم خلف نے روزنا الصباح کو انٹرویو میں کہا ہے کہ فرانس نے داعش کے خطرے کو پھیلنے سے روکنے کے بہانے دوہزار چودہ میں جن فوجیوں کو عراق بھیجا تھا انھیں وہ اس سے پہلے ہی عراق سے باہر نکال چکا ہے۔

گذشتہ ہفتے برطانیہ نے بھی کورونا پھیلنے کے خوف سے اپنے فوجیوں کو عارضی طور پر عراق سے باہر نکال لیا تھا اور اب اس کے کچھ اہم فوجی ہی عراق میں موجود ہیں۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close