عراق

عراق میں عدنان الزرفی عبوری حکومت تشکیل دینے پر مامور

شیعت نیوز: عراق میں عدنان الزرفی کو عبوری حکومت کی تشکیل پر مامور کر دیا گیا ہے۔

عراقی ذرائع کے مطابق عدنان الزرفی کو عبوری کابینہ کی تشکیل پر مامور کئے جانے کے بعد بعض سیاسی جماعتوں نے صدر برہم صالح کے پاس اپنا احتجاج بھی ریکارڈ کرایا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : عراق : حشد الشعبی کا داعشی دہشت گرد عناصر کے خلاف نئے آپریشن کا آغاز

عراق کے نامزد وزیراعظم محمد توفیق علاوی نے دو مارچ کو ایک ویڈیو پیغام جاری کر کے اپنے استعفے کا اعلان کیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ بعض سیاسی جماعتوں کے دباؤ کے سبب وہ استعفیٰ دینے پر مجبور ہوئے ہیں۔

عراقی صدر برہم صالح نے ان کے استعفے کو قبول کرتے ہوئے اعلان کیا تھا کہ آئندہ پندرہ دنوں میں سیاسی جماعتوں کے ساتھ صلاح مشورہ کرنے کے بعد وزارت عظمیٰ کے لئے کسی فرد کا اعلان کریں گے۔

یہ بھی پڑھیں : عراقی عوام کا حکومت سے امریکی جارحیت کے خلاف فوری کارروائی کا مطالبہ

واضح رہے کہ عراق کی اقتصادی صورتحال اور بے روزگاری کے خلاف کئی مہینوں تک عوامی مظاہرے جاری رہے جو بعد میں پر تشدد شکل اختیار کر گئے تھے۔ایسے میں ملک کے وزیر اعظم عادل عبدالمہدی نے حالات کی نزاکت کو دیکھتے ہوئے استعفیٰ دے دیا تھا۔

دوسری طرف عراق کی حکومت نے کورونا کی روک تھام کے پیش نظر دار الحکومت بغداد میں رفت و آمد پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : امریکہ کے دہشت گردانہ حملوں کا ہر حال میں جواب دیں گے۔ حشد الشعبی

فارس نیوز کے مطابق عراق کی حکومت نے اعلان کیا ہے کہ اس فیصلے پر سترہ مارچ سے چوبیس مارچ تک عملدرآمد کیا جائے گا۔

تازہ ترین رپورٹ کے مطابق اب تک عراق میں کورونا کے ایک سو گیارہ کیسز ریکارڈ کئے جا چکے ہیں جن میں سے دس بیماروں کو اپنی جان سے بھی ہاتھ دھونا پڑا ہے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close