عراق

داعش کی دراندازی روکنے کے لئے الحشد الشعبی مکمل طور پر آمادہ ہے: کمانڈر

عراق کے صوبے الانبار میں الحشدالشعبی کے آپریشنل کمانڈر نے اعلان کیا ہے کہ داعش دہشت گرد عناصر کی عراق میں دراندازی روکنے کے لئے عراق کی عوامی رضاکار فورس الحشدالشعبی مکمل طور پر آمادہ ہے۔

فارس خبر رساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق عراق کے صوبے الانبار میں الحشدالشعبی کے آپریشنل کمانڈرقاسم مصلح نے بدھ کے روز عراق اور شام کے مشترکہ سرحدی علاقے کے معائنے کے دوران مشترکہ سرحدوں پر دہشت گردوں کی سرگرمیوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ عراق کی سرحدیں الحشدالشعبی اور عراق کی سرحدی فورس کے مکمل کنٹرول میں ہیں۔انھوں نے اس سلسلے میں عراق کے سرحدی فوجی اہلکاروں اور عراق کی عوامی رضاکار فورس الحشدالشعبی کے درمیان پائی جانے والی مکمل ہم آہنگی کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ سرحدی علاقوں میں دہشت گردوں پر ہر طرح سے کڑی نظر رکھی جا رہی ہے۔

واضح رہے کہ شام کے التنف علاقے سے عراق میں داعشی دہشت گردوں کی دراندازی ایسی صورت میں انجام پا رہی ہے کہ شام کے اس علاقے پر امریکہ کے دہشت گرد فوجیوں کا قبضہ ہے۔الحشدالشعبی کے کمانڈر جنرل ہادی الخراسانی کا کہنا ہے کہ عراق و شام کے سرحدی علاقوں میں دہشت گرد امریکی فوجی داعشی دہشت گردوں کی تربیت اور ڈرون طیاروں کے ذریعے نئے راستے تلاش کر کے انھیں شام سے عراق پہنچانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close