اہم ترین خبریںعراق

عراق: صلاح الدین اور کرکوک صوبوں میں داعش کا نیٹ ورک تباہ، سامرا پر حملہ ناکام

شیعت نیوز : عراقی ذرائع کا کہنا ہے کہ سیکیورٹی فورسز نے صلاح الدین اور کرکوک صوبوں میں داعشی دہشت گردوں کا نیٹ ورک تباہ اور متعدد تکفیری گرفتار کیا ہے۔

الاخباریہ نیوز نے خبر دی ہے کہ حشد الشعبی کے جوانوں نے صلاح الدین اور کرکوک میں کارروائی کرکے متعدد داعشی دہشت گرد گرفتار کرلیا ہے۔

حشد الشعبی کے مرکزی دفترسے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ حشد الشعبی کے جوانوں نےصلاح الدین اورکرکوک کے مختلف شہروں خاص کر الشرقاط اورتکریت میں سرچ آپریشن کے دوران متعدد امریکی اسرائیلی حمایت یافتہ داعشی دہشت گردوں کو گرفتار کرلیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : عراقی عوام نے برطانوی سفیر اسٹیفن ہکی کو شٹ اپ کال دے دی

انسداد دہشت گردی یونٹ کے کمانڈر کا کہنا ہے کہ تکفیری دہشت گرد ایک نیا نیٹ ورک تیار کرنے میں کامیاب ہوئے تھے خفیہ اطلاع پر کارروائی کرکے تباہ کردیا گیا۔

دوسری جانب عراق کی عوامی رضاکار فورس حشد الشعبی نے صوبے صلاح الدین کے شہر سامرا پر حملے کے لئے داعش دہشت گرد گروہ کے باقیماندہ جراثیم کی کوشش کو ناکام بنا دیا۔

عراق کی عوامی رضاکار فورس حشد الشعبی نے ایک بیان میں اعلان کیا ہے کہ حشد الشعبی کی اکتالیسویں بریگیڈ کے جوانوں نے دہشت گردوں کے حملے کو ناکام بناتے ہوئے ان عناصر کو فرار ہونے پر مجبور کر دیا۔

حشد الشعبی کے جوانوں نے اسی طرح شمالی عراق کے صوبے نینوا کے شہر موصل میں داعش دہشت گرد گروہ کے ایک سرغنہ کو ہلاک بھی کیا ہے۔ عراق میں داعش دہشت گرد گروہ کی شکست کے باوجود اس گروہ کے بعض عناصر اس ملک کے مختلف علاقوں میں روپوش ہیں جو دہشت گردانہ کاروائیاں انجام دیتے رہتے ہیں۔

عراقی عوامی رضاکار فورس حشد الشعبی کا کہنا ہے کہ ملک بھر سے تمام تکفیری دہشت گردوں مکمل طور پر خاتمہ کیا جائے گا۔

دو ہزار چودہ میں داعش دہشت گرد گروہ نے امریکہ، اسرائیل اور اس کے مغربی و عرب اتحادیوں منجملہ سعودی عرب کی فوجی و مالی مدد و حمایت سے عراق پر حملہ کیا اور اس ملک کے بڑے وسیع شمالی اور مغربی علاقوں پر قبضہ کر لیا تھا اور پھر وحشیانہ ترین جرائم کا ارتکاب کیا۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close