عراق

عراق: صوبے الانبار میں دہشت گردوں کا صفایا ، متعدد داعشی دہشت گرد ہلاک

شیعت نیوز: عراق کی عوامی رضاکار فورس حشد الشعبی نے صوبے الانبار کے مغربی علاقے میں دہشت گردوں کا صفایا کرتے ہوئے اسود الصحرا نامی فوجی آپریشن مکمل ہونے کا اعلان کیا ہے۔

عراق کے صوبے الانبار کی آپریشنل کمان میں عوامی رضاکار فورس حشد الشعبی کے انچارج احمد نصراللہ نے اعلان کیا ہے کہ اس صوبے کے مغربی علاقوں، خاص طور سے سخت راستے والے علاقوں سے داعش دہشت گرد گروہ کے باقی بچے عناصر کا صفایا کر دیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ حشد الشعبی نے اپنی کاروائی کے دوران پانچ دہشت گردوں کو ہلاک جبکہ چار مشتبہ افراد کو گرفتار بھی کیا ہے۔ کارروائی کے دوران دھماکہ خیز مواد کی حامل ایک گاڑی کو بھی تباہ کر دیا گیا۔ اسکے علاوہ حشد الشعبی نے دہشت گردوں کی تین موٹر سائیکلوں کو ضبط کرنے کے ساتھ ساتھ مختلف علاقوں میں قائم دہشت گردوں کے کئی ٹھکانوں کو بھی نذر آتش کر دیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : محمد بن قاسم تاریخ اسلام کا ہیرو یا۔۔۔۔بنو امیہ کا سپاہی

اُدھر عراقی فوج نے بھی اعلان کیا ہے کہ حالیہ کارروائیوں کے دوران دہشت گرد عناصر کو بھاری نقصان پہنچا ہے اور اب وہ دوبارہ منظم نہیں ہو سکیں گے۔

عراق کی مشترکہ فوجی آپریشن کمیٹی کے ترجمان تحسین الخفاجی نے کہا ہے کہ بابل صوبے کے بعض علاقوں میں داعش تکفیری دہشت گرد عناصر کے حالیہ حملوں کا مقصد، رعب و وحشت پھیلا کر پروپیگنڈہ مہم میں کامیابی حاصل کرنا تھا۔

واضح رہے کہ عراق کے بعض علاقوں میں داعش دہشت گرد گروہ کے باقیماندہ جراثیم، موقع پا کر دہشت گردانہ حملے کرنے سے نہیں چوکتے اور اب ان کا خاتمہ کرنے کے لئے عراقی فورسز کی جد و جہد جاری ہے۔

دوسری طرف عراق کی پولیس نے اس ملک کے شمالی علاقے میں دہشت گردانہ حملے کو ناکام بناتے ہوئے تین دہشت گردوں کو ہلاک کر دیا ہے۔

عراق کی پولیس کا کہنا ہے کہ صوبہ کرکوک کے علاقے وادی الشای میں دہشت گردوں نے ایک چیکنگ پوائنٹ پر حملہ کیا جسے فورسز نے ناکام بنا دیا۔ اس حملے میں تین دہشت گرد ہلاک ہو گئے۔ اس واقعہ کے بعد سکیورٹی فورسز نے علاقے کا محاصرہ کرکے احتیاطی تدابیر مزید سخت کر دیں۔

دوسری جانب عراق کے سکیورٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ الحویجہ شہر کے الحلوات دیہی علاقے میں دہشت گرد گروہ داعش کے حملے میں دو سکیورٹی اہلکار جاں بحق ہو گئے۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close