سعودی عرب

اس سال سعودی عرب میں مقیم افراد ہی حج کر سکیں گے۔ سعودی وزارت حج و عمرہ

شیعت نیوز : سعودی وزارت حج و عمرہ نے ملک میں مقیم ایک سو ساٹھ ممالک کے شہریوں کو رواں برس حج کے لئے منتخب کیا ہے۔ دوسری طرف سعودی عرب میں کورونا میں مبتلا ہونے والوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔

ذرائع کے مطابق ایک سو ساٹھ ممالک کے شہریوں کی جانب سے موصول ہونے والی درخواستوں کی تحقیقات کے بعد سعودی وزارت حج نے رواں برس حج کے لیے ناموں کی فہرست کو حتمی شکل دے دی ہے۔

ٹوئٹر پر حرمین شریفین کے بیان میں کہا گیا کہ ہے سعودی وزارت حج نے سعودی عرب میں مقیم ایک سو ساٹھ ممالک کے شہریوں کو حج کے لیے چُن لیا ہے اور تمام منتخب امیدواروں کو ایس ایم ایس کے ذریعے اطلاع دے دی گئی ہے۔

حج کے لیے درخواستیں جمع کرانے کی آخری تاریخ دس جولائی مقرر کی گئی تھی اور اچھی صحت کو بنیادی نکتہ قرار دیا گیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں : انصاراللہ کا سعودی عرب کے دو شہروں پر ڈرون اور میزائلوں سے حملہ

حج پر مشرف ہونے والے عازمین میں ستر فیصد کا تعلق بیرون ممالک سے ہوگا جبکہ تیس فیصد سعودی عرب کے ہی شہری ہوں گے۔

سعودی وزارت داخلہ نے اعلان کیا ہے کہ اٹھائیس ذیقعدہ سے بارہ ذی الحجہ تک بغیر اجازت نامے کے منیٰ، مزدلفہ اور عرفات میں حج کے مقامات میں داخل ہونے کی کوشش کرنے پر دس ہزار سعودی ریال جرمانہ ادا کرنا ہوگا۔

یاد رہے کہ سعودی حکومت نے چوبیس جون کو اعلان کیا تھا کہ کورونا وائرس کے باعث عازمین کی تعداد کو محدود رکھتے ہوئے صرف سعودی عرب میں مقیم غیر ملکیوں کو حج کی اجازت دی جائے گی۔

دوسری جانب سعودی عرب میں کورونا میں مبتلا ہونے والوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔

رپورٹ کے مطابق سعودی عرب کی وزارت صحت کا کہنا ہے کہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران اس ملک میں کورونا کے مزید نئے کیسز درج ہوئے جس کے بعد کورونا میں مبتلا ہونے والوں کی تعداد بڑھ کر 2 لاکھ 35 ہزار 111 ہو گئی۔

سعودی عرب کی وزارت صحت کے مطابق کورونا کے بڑھتے قہر سے اب تک 2 ہزار 243 افراد ہلاک ہوئے جس سے دکھائی دیتا ہے کہ اس ملک میں کورونا سے متاثر اور ہلاک ہونے والوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔

 

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close