اہم ترین خبریںمقبوضہ فلسطین

ہم قاسم سلیمانی کے نقش قدم اور ان کے مشن پر گامزن رہیں گے،سربراہ حماس اسماعیل ہنیہ

دنیا کو شہید قاسم سلیمانی پر امریکہ کے دہشت گردانہ حملے کی مذمت کرنی چاہیے۔

شیعت نیوز: تہران میں فلسطین کے سابق وزيراعظم اور فلسطینی تنظیم حماس کی خارجہ پالیسی کے سربراہ اسماعیل ہنیہ نے شہید قاسم سلیمانی کے تشیع جنازہ کے عظیم اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ دنیا کو شہید قاسم سلیمانی پر امریکہ کے دہشت گردانہ حملے کی مذمت کرنی چاہیے۔

یہ بھی پڑھیں:وزیراعظم کسی پراکسی وار کا حصہ نہ بننے کے عہد سے ہرگز یوٹرن نہ لیں، علامہ قاضی نیاز حسین نقوی

اسماعیل ہنیہ نے کہا کہ ہم رہبر معظم انقلاب اسلامی، ایرانی حکومت اور ایرانی عوام کو شہید قاسم سلیمانی کی دردناک شہادت پر تعزیت اور تسلیت پیش کرنے کے لئے حاضر ہوئے ہیں۔

اسماعیل ہنیہ نے کہا کہ مسلمانوں کے قبلہ اول بیت المقدس سے تہران آیا ہوں، میں ایران کی غیور اور بہادر عوام کو سلام پیش کرتا ہوں جنھوں نے ہمیشہ فلسطینیوں کا ساتھ دیا، شہید قاسم سلیمانی بیت المقدس کی آزادی کی علامت ہیں اور ہم ان کے نقش قدم اور ان کے مشن پر گامزن رہیں گے۔

یہ بھی پڑھیں:۱۲۰علمائے کرام، مشائخِ عظام، مفتیانِ دین کاحکومت سے امریکا کی کسی صورت حمایت نا کرنے کا مطالبہ

انھوں نے کہا کہ میں شہید قاسم سلیمانی کے اہلخانہ اور فرزندوں کو تعزیت پیش کرنے کے لئے آیا ہوں۔ شہید قاسم سلیمانی کا ہم سب پر احسان ہے۔

فلسطینی تنظیم حماس کے سربراہ نے کہا کہ شہید قاسم سلیمانی نے اپنی پوری زندگی فلسطینیوں کی حمایت اور بیت المقدس کی ازادی کے سلسلے میں صرف کی۔ ہم انھیں سلام پیش کرتے ہیں۔ ہم ان کے مشن کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لئے کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔

یہ بھی پڑھیں:حکومت امریکی حملے کی مذمت کرکے عوامی ترجمانی کا حق اداکرے، علامہ رضی جعفر نقوی

اسماعیل ہنیہ نے کہا کہ غاصب صہیونی حکومت پر اسلامی مزاحمت کی کامیابی اور فتح یقینی ہے اور ہم اسرائیل کو نابود کر کے شہید قاسم سلیمانی کی روح کو شاد کریں گے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close