مقبوضہ فلسطین

اسرائیلی جیل میں قید فلسطینی خاتون رہنما 4 سال کے بعد رہا

اسرائیلی جیل میں‌ ایک فلسطینی خاتون رہنما جیھان محمد حشیمہ کو 46 ماہ قید کے بعد رہا کردیا گیا۔

مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق مقبوضہ بیت المقدس کے عیسویہ کے مقام سے تعلق رکھنے والی 40 سالہ جھیان حشیمہ کو اسرائیلی فوج نے چار سال قبل حراست میں لیا تھا۔

خبر کے مطابق حشیمہ کو 30 دسمبر 2016ء کو حراست میں لیا تھا۔ انہیں شمالی بیت المقدس میں قلندیہ کے مقام سے گولیاں مار کر زخمی حالت میں گرفتار کیا گیا تھا۔ اس کے بعد اس کے خلاف طویل جوڈیشل ٹرائل کیا گیا اور عدالت میں 10 پیشیوں کے بعد اسے چار سال قید کی سزا سنائی گئی تھی۔

حشیمہ تین بچوں‌کی ماں ہیں اور انہیں پہلے بھی ایک سے زاید بار صہیونی جیلوں میں قید کیا گیا ہے۔ دوران حراست اسے قید تنہائی اور دیگر سنگین نوعیت کے پرتشدد ہتھنڈوں کا سامنا کرتی رہی ہے۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close