اہم ترین خبریںدنیا

دیوبندی تبلیغی جماعت کی جانب سے عالمی سطح پر کورونا وائرس کی تباہ کاریاں تیزی سے جاری

مقبوضہ کشمیر میں کورونا وائرس پھیلنے اور جموں سے بھی سترہ (17)کیس رپورٹ ہونے پر مقبوضہ وادی کے پولیس حکام نے تمام تبلیغیوں کو گرفتار کرلیا ہے

شیعت نیوز: دیوبندی تبلیغی جماعت کی جانب سے عالمی سطح پر کورونا وائرس کی تباہ کاریاں تیزی سے جاری ہیں،پاکستان کو کورونا وائرس کی خطرناک وبامیں ملوث کرنے کے بعد ملائشیا، فلسطین اور اب کشمیر میں بھی ان تبلیغیوں کی لاپرواہی اور ہٹ دھرمی کے سبب سینکڑوں افراد متاثرجب کے جماعت کا سربراہ ہلاک ہوگیا ہے ۔

مقامی پولیس کی جانب سے دیوبندی تبلیغی جماعت کے کارندوں کے خلاف کریک ڈاؤن کا آغاز کردیا گیا ہے، جبکہ مساجد کی ناکہ بندی سمیت متعدد تبلیغیوں کی گرفتاریاں بھی عمل میں لائی گئی ہیں ۔

ذرائع کے مطابق محمد اشرف جس کی عمر 65برس ہے تبلیغی جماعت کا علاقائی امیر ہے، دوہفتے قبل اس نے تبلیغی جماعت کے اجتماع میں شرکت کی ، واپس آکر تبلیغی جماعت کی ٹیمیں تشکیل دے کر علاقہ میں اسلام کی تبلیغ کےلئےروانہ کردیں۔

یہ بھی پڑھیں: سعودی جنگ میں شریک 2ہزار سےزائد تکفیری دہشتگردوں کی پاکستان میں تلاش جاری

اطلاعات کے مطابق محمد اشرف کے ساتھ رابطے میں آنے والے 11اور اراکین کےبھی کورونا وائرس میں مبتلا ہونے کی خبریں موصول ہوئی ہیں، جبکہ تبلیغی جماعت کی باقی ٹیموں کو بھی گرفتار کرلیا گیا ہےاور ان کے کوروناٹیسٹ کرائے گئے ہیں ۔ جن کی رپورٹس جلد ملنے کا امکان ہے۔

قبل ازیں یہ تمام علاقہ کورونا وائرس سے مکمل پاک اور محفوظ تھالیکن تشویشناک صورتحال یہ ہے کہ اب تمام علاقے میں کورونا وائرس کہاں کہاں تک پھیل چکا ہے حکومت کی طرف سے اس کی تحقیق جاری ہے ۔

اس وقت کی موصولہ اطلاعات کے مطابق حکومت 5ہزار763لوگوں کو شناخت کرکے قرنطینہ میں منتقل کرچکی ہے ، یہ واقعات مقبوضہ کشمیر کے ہیں جہاںبھارتی حکومت کی جانب سے مکمل لاک ڈاؤن کی وجہ سے گزشتہ ماہ پابندیاں ترم کرنےکا عمل شروع کیا گیا تھا۔

بھارتی مقبوضہ کشمیر کی دیوبندی تبلیغی جماعت کے سربراہ محمد اشرف نے لاک ڈاؤن کی نرمی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے ایک تبلیغی اجتماع میں شرکت کی تھی جسے بھارتی حکام نے ایک زوربعد ہی منتشر کردیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: اندھیرنگری چوپٹ راج، نمازجمعہ کی عدم ادائیگی کے باوجود علامہ مرزا یوسف حسین پرمقدمہ درج

محمد اشرف اجتماع میں وائرس سے متاثر ہوکر مقبوضہ کشمیر واپس آیا اور تبلیغی ٹیمیں تشکیل دینے میں مصروف ہوگیا، محمد اشرف طبیعت خراب ہونے پرصورہ میڈیکل انسٹیٹیوٹ سری نگر علاج کیلئے پہنچا مگر تب تک بہت دیر ہوچکی تھی اور کورونا وائرس نے اس کی جان لے لی۔

مقبوضہ کشمیر میں کورونا وائرس پھیلنے اور جموں سے بھی سترہ (17)کیس رپورٹ ہونے پر مقبوضہ وادی کے پولیس حکام نے تمام تبلیغیوں کو گرفتار کرلیا ہےاوربھارت بھرمیں انکی نقل وحمل اور مساجد پر بھی پابندی عائد کردی ہے ۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close