اہم ترین خبریںپاکستان

کوہاٹ، حالیہ شیعہ ٹارگٹ کلنگ میں ملوث کالعدم سپاہ صحابہ کے3دہشت گردگرفتار

انہوں نے گرفتار تینوں دہشتگردوں کو میڈیا کے سامنے پیش کرتے ہوئے بتایا کہ دہشتگردوں نے چھ ستمبر کو قیصر عباس نامی نوجوان، جبکہ اس کے بعد سید ارتضٰی حسین اور میر حسن جان نامی شیعہ شہریوں کو نشانہ بنا کر شہید کیا تھا۔

شیعیت نیوز: خیبرپختونخوا پولیس کی بڑی کامیابی ،شیعہ ٹارگٹ کلنگ کی حالیہ کاروائیوں میں ملوث کالعدم سپاہ صحابہ /لشکرجھنگوی کے تین خطرناک دہشت گرد گرفتار۔ پولیس کی جانب سے گرفتار ملزمان میڈیا کے سامنے پیش۔

تفصیلات کے مطابق کوہاٹ پولیس نے حالیہ شیعہ ٹارگٹ کلنگ میں ملوث گروہ کے تین دہشتگردوں کو گرفتار کرلیا ہے۔ ڈی پی او کوہاٹ نے میڈیا بریفنگ کے دوران بتایا کہ یہ گروہ کوہاٹ میں بدامنی پھیلانے اور شیعہ، سنی فسادات کرانے میں ملوث تھا۔

یہ بھی پڑھیں: مفتی منیب الرحمان مخصوص ایجنڈے کے تحت ملک میں فرقہ واریت پھیلا رہا ہے، علماءومشائخ اہل سنت

انہوں نے گرفتار تینوں دہشتگردوں کو میڈیا کے سامنے پیش کرتے ہوئے بتایا کہ دہشتگردوں نے چھ ستمبر کو قیصر عباس نامی نوجوان، جبکہ اس کے بعد سید ارتضٰی حسین اور میر حسن جان نامی شیعہ شہریوں کو نشانہ بنا کر شہید کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: ملک بھر میں 32 سے زائد چھوٹے بڑےشیعہ مخالف جلسے اور ریلیاں ہوئیں وہ جلوس عزا روکنے والے محکمہ داخلہ کو دکھائی نہیں دیں،علامہ اسدی

ڈی پی او کا کہنا تھا کہ دونوں قتل کی وارداتوں میں مماثلت تھی، گرفتار دہشتگردوں کا مقصد علاقہ میں شیعہ، سنی فسادات کرانا تھا اور یہ دوران تفتیش ثابت ہو گیا ہے۔ میں خود اس معاملہ کو دیکھ رہا تھا، اس واقعہ پر لوگوں کا ردعمل آیا، جو میرے خیال میں ایک فطری عمل تھا۔ الحمدللہ ہم اپنے مشن میں کامیاب ہوئے اور قاتلوں کو پکڑ لیا۔ اس کیس میں ہم نے بہت محنت کی۔

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close