اہم ترین خبریںپاکستان

ناصرشیرازی کا شہریارآفریدی سے رابطہ، جھنگ کےزائرین کےگھروں سے متنازع نوٹس اتاردیئےگئے

شہریار آفریدی کو بتایا گیا کہ جھنگ کے جو زائرین اپنی قرنطینہ کی مدت پوری کرنے کے بعد اپنے گھروں کو روانہ کیے گئے ہیں ان کی رہائش گاہوں کے باہر کورونا وائرس کے بورڈ آویزاں کرنا سمجھ سے بالاتر اور نامناسب عمل ہے۔

شیعت نیوز: مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل سید ناصر شیرازی نے وزیر اعظم عمران خان کے فوکل پرسن شہریار آفریدی سے رابطہ کر کے انہیں ملک کے مختلف شہروں میں قائم قرنطینہ سینٹرزکے مسائل سے آگاہ کیا جبکہ قرنطینہ مکمل کرکے جھنگ پہنچنے والے زائرین کے گھروں پر آویزاں متنازع نوٹس چسپاں کرنے پر اعتراض اٹھایا۔ زائرین کو درپیش مشکلات پر بھی فریقین کے درمیان تفصیلی بات چیت ہوئی اور ان کے حل کے لیے موثر حکمت عملی طے کرنے کی یقین دہانی کرائی گئی۔

یہ بھی پڑھیں: سعودی عرب کے بگڑتے حالات، محمد بن سلمان کےحوالے سےنامور صحافی ہارون الرشید کےتہلکہ خیزانکشافات

شہریار آفریدی کو بتایا گیا کہ جھنگ کے جو زائرین اپنی قرنطینہ کی مدت پوری کرنے کے بعد اپنے گھروں کو روانہ کیے گئے ہیں ان کی رہائش گاہوں کے باہر کورونا وائرس کے بورڈ آویزاں کرنا سمجھ سے بالاتر اور نامناسب عمل ہے۔ صحت یاب افراد کے گھروں کے باہر اس طرح کی غیر ضروری تحریریں لگانے کا سلسلہ روکا جائے گاتاکہ منافرت کی جو فضا پیدا ہورہی ہے اس پر قابو پایا جا سکے۔اس طرح کے اقدامات ملت تشیع کی دانستہ کردار کشی کے مترادف ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پاکستان بھر میں عالمی وبا کورونا وائرس کے مصدقہ مریضوں کی تعداد 5829سے تجاوز کر گئی

شہریار آفریدی نے فوری نوٹس لیتے ہوئے جھنگ کی متعلقہ انتظامیہ کو ہدایات جاری کیں اورزائرین کے گھروں کے باہر چپساں وہ نوٹس اتار لیے گئے۔ اسی طرح فیصل آباد اور شیخوپورہ کی اعلی انتظامیہ کو بھی زائرین کے مسائل حل کرنے کے لیے موقعہ پر ہدایات جاری کی گئیں ۔ مظفر گڑھ کے ڈپٹی کمشنر کوبھی بچیوں سے رابطہ کرکے ان کی داد رسی کرنے کے احکامات جاری کیے گئے۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close