دنیا

پاکستان اور ایران مہاجرین کے بڑے میزبان ممالک ہیں۔ انتونیو گوتریس

شیعت نیوز: پاکستان کے دارالحکومت اسلام آباد میں آج افغان مہاجرین کانفرنس سے اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس اور پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے خطاب کیا۔

اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس نے اسلام آباد میں افغان مہاجرین کانفرنس سے خطاب کے دوران کہا کہ 40 سال سے افغان عوام مسائل کا شکار ہیں، پاکستان نے اپنے اندرونی مسائل کے باوجود افغان مہاجرین کیلئے مثبت اقدامات کئے۔

یہ بھی پڑھیں : جنرل قاسم سلیمانی کی شہادت کے بعد، داعش پھر طاقتور ہو رہا ہے اقوام متحدہ

انتونیو گوتریس نے کہا کہ عالمی برادری کو پاکستان میں افغان مہاجرین کے لیے آگے آنا چاہئے، پاکستان اور ایران دنیا بھرمیں مہاجرین کے بڑے میزبان ملک ہیں۔

سیکرٹری جنرل اقوام متحدہ کا کہنا تھا کہ افغان مسئلے کے تمام حل افغانستان کی سرزمین میں ہی پنہاں ہیں، افغانستان اور اس کے عوام کو اب تنہا نہیں چھوڑنا ہوگا، عالمی برادری کو اب افغانستان کے مسئلے پر اپنا ذمہ دارانہ کردار ادا کرنا ہوگا۔

یہ بھی پڑھیں : اسرائیلی بستیوں کی تعمیرغیرقانونی ہے : اقوام متحدہ

کانفرنس سے وزیراعظم پاکستان عمران خان نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ نائن الیون کے بعد اسلام اور دہشت گردی کو ساتھ جوڑا گیا تاہم اب پاکستان میں دہشت گردوں کے کوئی ٹھکانے نہیں ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : ایرانی قوم امریکہ کے مقابلے میں آخری دم تک ڈٹی رہے گی۔ آیت اللہ خامنہ ای

عمران خان نے کہا کہ افغان امن عمل کے لیے پاکستان نے بہت کوشش کی ہے اور افغان عوام نے چالیس سال میں بہت سی مشکلات برداشت کیں، افغان مسئلے کے حل پر حکومت اور سیکورٹی فورسز کا موقف یکساں ہے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close