اہم ترین خبریںپاکستان

پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر دہشت گردی ملکی معیشت پر حملہ ہے۔ شیعہ علماء

شیعت نیوز : معروف شیعہ عالم دین علامہ رضی جعفر نقوی، علامہ حسن ظفر نقوی، علامہ ناظر عباس تقوی اور علامہ باقر عباس زیدی نے کراچی اسٹاک ایکسچینج میں دہشت گردوں کے حملے کی مذمت کرتے ہوئے اسے پاکستان کی دشمن قوت بھارت کی سازش قرار دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ بھارت کو پاکستان میں امن اور ترقی برداشت نہیں ہو رہی، سکیورٹی فورسز کی محنت اور عوام کے تعاون سے کراچی میں امن و امان بہتر ہوا تھا جس کو یہ دہشت گردی کے ذریعے پھر خراب کرنا چاہتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ آج سے پہلے دہشت گرد اسکولوں پر حملے کرکے معصوم بچوں کو نشانہ بنا رہے تھے لیکن آج ان دہشت گردوں نے ملک کے معاشی حب پر حملہ کرکے پاکستان کی معاشی صورتحال کو مزید خراب کرنے کی کوشش کی ہے، قوم دہشت گردی کے خلاف متحد رہے، الحمداللہ رینجرز اور پولیس کی بر وقت کاروائی نے دہشت گردوں کے عزائم ناکام بنادیئے اور شہر کراچی آج ایک بڑی تباہی سے بچ گیا، ہم اس واقعے میں شہید ہونے والے تمام افراد کے اہل خانہ سے دلی ہمددری اور افسوس کا اظہار کرتے ہیں اور زخمی ہونے والے تمام افراد کی صحتیابی کے لئے دعاگو ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : پاکستان اسٹاک ایکسچینج حملے کے تانے بانے بھارتی سلیپر سیل سے ملیں گے، شاہ محمود قریشی

مجلس وحدت مسلمین صوبہ سندھ کے سیکریٹری جنرل علامہ سید باقر عباس زیدی نے کہا ہے کہ پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر دہشت گردانہ حملے کی مذمت کرتے ہیں، پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر دہشت گردی ملکی معیشت پر حملہ ہے، پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر دہشت گردی قانون نافذ کرنے والے اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے۔

ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ حملے میں ملوث دہشت گردوں اور سہولت کاروں کو فوری گرفتار کیا جائے، حکومت کو دہشت گردوں کے خلاف سابقہ کامیاب کاروائیوں کی طرح سخت آپریشن کا سلسلہ جاری رکھنا ہوگا، حملے میں شہید اور زخمی ہونے والوں کے اہلخانہ کے درد میں شریک غم ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ سیکورٹی اہلکاروں کی موثر کارروائی کے نتیجے میں پاکستان دشمن عناصر کو ناکامی ہوئی، دہشت گردی کے واقعے میں شہید ہونے والے سیکورٹی اہلکاروں کے اہل خانہ سے اظہار ہمدردی ہے، واقعے میں زخمی سیکورٹی اہلکاروں کی جلد از جلد صحتیابی کیلئے دعاگو ہیں۔

 

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close